پانامہ لیکس، کمیشن کی تشکیل کیلئے فریقین سے رائے طلب، کارروائی آدھے گھنٹے کیلئے معطل

پانامہ لیکس، کمیشن کی تشکیل کیلئے فریقین سے رائے طلب، کارروائی آدھے گھنٹے ...
پانامہ لیکس، کمیشن کی تشکیل کیلئے فریقین سے رائے طلب، کارروائی آدھے گھنٹے کیلئے معطل

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سپریم کورٹ نے پانامہ لیکس کے معاملے پر کمیشن کی تشکیل کیلئے فریقین کی رائے طلب کرتے ہوئے کارروائی آدھے گھنٹے کیلئے معطل کر دی ہے۔

”سوچ رہا ہوں اپنے پیسے بھی شریف خاندان کو دے دوں تاکہ ڈبل ہو جائیں “: شیخ رشید

تفصیلات کے مطابق آدھے گھنٹے کی وقفے کے بعد کیس کی سماعت دوبارہ شروع ہوئی تو سپریم کورٹ نے کہا کہ نعیم بخاری سے کہا کہ اس معاملے پر کمیشن بنا دیں یا ہم فیصلہ دیدیں جس پر نعیم بخاری نے کہا کہ آپ 62 اور 63 سے متعلق فیصلہ کر دیں جس پر سپریم کورٹ نے کہا کہ 62 اور 63 سے متعلق آپ پہلے ہی سپیکر کا فورم استعمال کر چکے ہیں جس پر نعیم بخاری خاموش ہو گئے۔

زیر کفالت ہونے کا معاملہ ابھی حل نہیں ہوا ،پاناما لیکس کیس میں جسٹس عظمت سعید کے ریمارکس

عدالت نے مزید کہا کہ پانامہ لیکس کو 3/184 میں دیکھ رہے ہیں، دستاویزی شواہد میں دونوں طرف سے گیپس ہیں اور بہت سی دستاویز ایسی ہیں جن کی تصدیق کیلئے تحقیقات کی ضرورت ہے جبکہ کرمنل پروسیڈنگز میں شک کا فندئہ ملزم کو جاتا ہے ۔ عدالت نے نعیم بخاری سے کہا کہ آپ اپنے موکلین سے پوچھ کر بتائیں کہ وہ کمیشن بنانا چاہتے ہیں یا نہیں۔ عدالت نے فریقین سے کمیشن کے قیام پر رائے طلب کرتے ہوئے کارروائی آدھے گھنٹے کیلئے معطل کر دی ہے۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -