کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کو رول ماڈل بنائیں گے،جسٹس شاکر اللہ جان

کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کو رول ماڈل بنائیں گے،جسٹس شاکر اللہ جان

لاہور( سٹی رپورٹر)پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل ، کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی اور یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے اشتراک سے میڈیکل ایڈٹینگ اور پبلیکیشنز کے عنوان سے ورکشاپ کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی منعقد کی گئی۔ ورکشاپ کے مہمان خصوصی مسٹر جسٹس میاں شاکر اللہ جان صدر پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل جبکہ گیسٹ آف آنرز کے طورپر وائس چانسلر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسزپروفیسر جاوید اکرم اور وائس چانسلر فاطمہ جناح میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر عامر زمان خاں نے شرکت کی۔ مہمان خصوصی نے کہاکہ کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کی شاندار تاریخی حیثیت کے پیش نظر اس کو طبی تحقیق کے شعبہ میں خطے کا رول ماڈل ادارہ دیکھنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ پی ایم اینڈ ڈی سی میں معیاری طبی تعلیم اور اداروں کی بہتری کے لئے اصول و ضوابط لاگو کئے ہیں مستقل قریب میں تمام طبی اداروں میں یکساں نصاب تعلیم ہوگا صرف مقرر کردہ اعلیٰ معیار پر پورا اترنے والی نئی یونیورسٹیوں کو اجازت دی جائے گی۔ وائس چانسلرکنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر خالد مسعود گوندل نے یونیورسٹی کی 158 سالہ خدمات پر روشنی ڈالی۔ وائس چانسلر یو ایچ ایس پروفیسر جاوید اکرم نے کہا کے ای ایم یو میری مادر علمی ہے اور میرے دل کے قریب ہے اس وقت اس کی قیادت ذمہ دار ہاتھوں میں ہے اور ہمیں اداروں کے باہمی تعاون سے ایک دوسرے کو مضبوط کرناہوگا اور معیاری طبی تحقیق کے لئے مشترکہ کاوشیں کرنا ہوگی۔ صد ر پی ایم اینڈ ڈی سی کا کہنا تھا کہ ہم ای فائلنگ اور آن لائن رجسٹریشن کا نظام بھی متعارف کروا رہے ہیں۔ ورکشاپ میں ڈاکٹر شوکت علی جاوید ، پروفیسر ڈاکٹر محمد عرفان ، ڈاکٹر مبین راٹھور ، ڈاکٹر امداد علی رجسٹرار پی ایم اینڈ ڈی سی نے تربیتی سیشن کروائے پنجاب بھر کے طبعی اداروں سے آئے ڈاکٹرز اور پروفیسرز کی کثیر تعداد نے اس تربیتی ورکشاپ میں شرکت کی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1