ایس ایم ای سیکٹر کی ترقی کیلئے سازگار پالیسیاں بنا رہے ہیں : سی ای او سمیڈا

ایس ایم ای سیکٹر کی ترقی کیلئے سازگار پالیسیاں بنا رہے ہیں : سی ای او سمیڈا

لاہور(نیوزرپورٹر)ایس ایم ای سیکٹر کی ترقی کیلئے سازگار پالیسوں کی تشکیل کا عمل شروع کر دیا گیا ہے اور اس ضمن میں قومی ایس ایم ای پالیسی ۷۰۰۲ کی موجودہ حالات کے مطابق تجدید کیلئے ایک سٹیئرنگ کمیٹی تشکیل دے دی ہے جس کا پہلا اجلاس سینیٹر نعمان وزیر اور وفاقی سیکرٹری وزارت صنعت وپیدوار اظہر علی چوہدری کی صدارت میں اگلے روز اسلام آباد میں منعقد ہوا ۔ اس امر کا اظہار سمال اینڈ میڈیم انٹر پرائزز ڈویلپمنٹ اتھارٹی ’سمیڈا‘ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر شیر ایوب خان نے اپنے ایک بیان میں کیا۔ انہوں نے بتا یا کہ سٹیئرنگ کمیٹی میں وفاقی وزارت صنعت و پیداوار کے علاوہ وزارت تجارت، وزارت حزانہ، وزارت پلاننگ ، ایوانہائے صنعت و تجارت اور کاروباری برادری کے نمائیندوں کو شامل کیاگیاہے اور تمام تر پہلی سٹیئرنگ کمیٹی کے اجلاس میں نہ صرف موجود تھے ،بلکہ انہوں نے ایس ایم ای سے متعلق پالیسی سازی کیلئے بھرپور انداز سے اپنی تجاویز و آراء پیش کیں۔انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں سینیٹر نعمان وزیر ،سیکرٹری صنعت و پیداوار اظہر علی چوہدری ، یونین آف سمال اینڈ میڈیم انٹر پرائزز کے صدر ذوالفقار تھاور، امریکی ادارہ برائے بین الاقوامی ترقی کے سینئر پالیسی ایڈوائزر سلیمان غنی ، فرخ محبوب خان اور سٹیٹ بنک کے ڈویلپمنٹ فنانس گروپ کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ثمر حسنین کی طرف سے انتہائی موٗثر اور قابل عمل تجاویز سامنے آئی ہیں۔سمیڈاکے چیف ایگزیکٹو آفیسر نے کہا کہ نئی ایس ایم ای پالیسی میں ایسے اقدامات تجویز کئے جارہے ہیں جن سے ملک کے اندر پہلے سے موجود ایس ایم ایز کیلئے آسانیوں اور سہولتوں کی فراہمی ممکن ہو گی اور پڑھے لکھے نوجوانوں کو کاروبار کرنے کی ترغیب بھی ملے گی۔ علاوہ ازیں ایس ایم ای پالیسی کی تجاویز میں متعدد ایسے اقدامات متعارف کرنے کی سفارشات بھی شامل ہونگی جو غیر رسمی شعبہ میں پائی جانے والی لاتعداد ایس ایم ایز کو رسمی شعبہ میں لانے کا باعث بنیں گے۔

انہوں نے کہاکہ سٹیئرنگ کمیٹی کی ہدایات کے مطابق ایس ایم ای پالیسی کی تشکیل میں افزائش روزگا ، فروغ برآمدات ، صنعتوں کی جدت طرازی اور ویلیو ایڈیشن پر خصوصی توجہ دی جا رہی ہے۔دریں اثناء سینیٹر نعمان وزیر اور سیکرٹری صنعت و پیداوار نے سمیڈا کے تحت جاری ایس ایم ای کیلئے سازگار پالیسیوں کی تشکیل کے عمل پر اطمینان کا اظہار کیاہے اور امید کی ہے کہ یہ عمل ملک میں ایک مثالی ایس ایم ای پالیسی لانے پر منتج ہوگا۔ یہ امر قابل ذکر ہے کہ سمیڈا کے تحت پہلی ایس ایم ای پالیسی ۷۰۰۲ میں متعارف کرائی گئی تھی اور اس پالیسی کی تجدید کیلئے سمیڈا نے وسیع تر مشاورت کا عمل پہلے ہی سے شروع کر رکھا تھا جس کے تحت ملک گیر سطح پر ایس ایم ای کے سٹیک ہولڈرز اور ماہرین کے ساتھ مباحثے اور انٹرویوز منعقد کئے جاچکے ہیں۔

مزید : کامرس