چارسدہ میں اشتہاریوں اور منشیات فروشوں کیخلاف خصوصی آپریشن کا فیصلہ

چارسدہ میں اشتہاریوں اور منشیات فروشوں کیخلاف خصوصی آپریشن کا فیصلہ

چارسدہ (بیورو رپورٹ) ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نے کل سے 31دسمبر تک اشتہاری ملزمان اور منشیات فروشوں کے خلاف حصوصی اپریشن شروع کرنے کے احکامات جاری کر دئیے ۔ملک دشمن اورسماج دشمن عناصر کی بیخ کنی کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لانے اور عمائدین علاقہ سمیت منتخب عوامی نمائندوں کا تعاون بھی حاصل کرنے کی ہدایت ۔ تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر چارسدہ عرفان اللہ خان کی زیر صدارت چارسدہ پولیس کا غیر معمولی اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں میں ایس پی انوسٹی گیشن نذیر خان ،ڈی ایس پی سرڈھیری فضل شیر خان ، ڈی ایس پی شبقدر محمد ریاض خان ، ڈی ایس پی سٹی بشیر احمد خان یوسفزئی ، ڈی ایس پی تنگی تاج محمد خان ، تمام ایس ایچ اوز، انچارج شعبہ تفتیش اورجملہ انچارج چوکیات نے شرکت کی۔ اجلاس میں ضلع بھر میں امن و امان کی مجموعی صورتحال ،جرائم کے انسدادی کاروائیوں اور نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد کا خصوصی جائزہ لیا گیا۔اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر عرفان اللہ خان نے کل 7دسمبر سے 31دسمبر تک تک اشتہاری ملزمان اور منشیات فروشوں کے خلاف حصوصی اپریشن شروع کرنے کے احکامات جاری کر دئیے ۔انہوں نے پولیس حکام پر زور دیا کہ ملک دشمن اورسماج دشمن عناصر کی بیخ کنی کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لا ئے جائیں اور عمائدین علاقہ سمیت منتخب عوامی نمائندوں کا تعاون بھی حاصل کریں تاکہ ضلع چارسدہ کو امن کا گہوارہ بنایا جا سکے ۔اجلاس میں ڈی پی او چارسدہ نے واضح کیا کہ عوام کی جان و مال کی خفاظت پولیس کی اولین ذمہ داری ہے ۔ جرائم کی بیخ کنی عوام کے تعاون کے بغیر ممکن نہیں اس لئے پولیس حکام تھانوں اور دفاتر میں عوام اور بزرگ شہریوں سے حسن احلاق کا مظاہرہ کریں تاکہ ان کا پولیس پر اعتماد بڑھ جائے ۔ انہوں نے واضح کیا کہ سز ا اور جزا کا عمل جاری رہے گااور تمام سرکل ڈی ایس پیز اور ایس ایچ اوز سمیت تمام پولیس حکام کو اعلی کارکر دگی پر ترقی اور انعامات دئیے جائینگے ۔انہوں نیشنل ایکشن پلان پر عمل در آمد تیز کرنے کی ہدایت کی اور کہا کہ اس حوالے سے روزانہ کی بنیا د پر اپریشن جاری رکھا جائے ۔اس موقع پر تمام سرکل ڈی ایس پیز بشیر احمد خان ، فضل شیر خان ، تاج محمد خان ، محمد ریاض خان ،پی آر او صفی اللہ اور پی آر او سٹاف کو توصیفی سرٹفیکیٹ دئیے گئے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر