تحصیل میدان کے باشندں کی نادراآفس منتقلی کیخلاف احتجاج کی دھمکی

تحصیل میدان کے باشندں کی نادراآفس منتقلی کیخلاف احتجاج کی دھمکی

تیمرگرہ ( بیورورپورٹ) تحصیل میدان کے رہایشیوں نے ضلع دیر پائین کے علاقہ میدان میں گزشتہ دور حکومت میں منظور کردہ نادرا آفس کو دوسری جگہ منتقل ہنے کے خلاف احتجاج کی دھمکی دے دی مکینوں کے مطابق گزشتہ دور حکومت میں منظور کردہ نادرا آفس سیاست کی نذر ہو گیاہے جبکہ نادرا آفس پر اختلافات کے باعث میدان سے نادرا دفتر کہیں اور منتقل ہونے کا خدشہ ہے جس سے کئی دہائیوں سے نادرا دفتر کے منتظر میدان کے عوام کو ایک بار پھر مزید انتظار کرنا پڑے گا نادرا آفس فعال نہ ہونے کے باعث میدان کے رہایشیوں کے مسائل میں مزید اضافہ ہو گیا ہے علاقہ مکینوں کے مطابق نادرا آفس پر سیاست چمکانے والوں کی جنگ کا خمیازہ اہل میدان کو بھگتنا پڑرہا ہے ، ضلع دیر پائین کے گاوں شگئی سے تعلق رکھنے والے عتیق الرحمان ، اور دیگر نے پشاور پریس کلب میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ دور حکومت میں جماعت اسلامی کے ایم این اے اور پی کے 17کے سابقہ ایم پی اے نے میدان میں حکومت سے علاقہ میں نادرا دفتر کی منظوری لی جس کے لئے باقاعدہ طور پر نومبر 2017میں جگہ کا تعین کیا گیا اور پھر جنوری 2018میں دفتر پر باقاعدہ افتتاح بھی کیا انکا کہنا تھا کہ نادرا آفس کے لئے این ٹی ایس کے ذریعے سٹاف کا چناوٗ کیا گیا جبکہ نادرا آفس کے زمین کے مالک کے ساتھ ایگریمنٹ بھی سائن کیا گیا جس کے باعث زمین کے مالک نے دفتر بنانے پر 8سے 10لاکھ روپے تک کا خرچہ بھی کیا انکا مزید کہنا تھا کہ 2018الیکشن قریب ہونے کے باعث گزشتہ دور حکومت میں نادرا آفس نے کام شروع نہیں کیا جبکہ نئی حکومت کے بننے کے ساتھ ہی میدان کے عوام کو امید مل گئی کہ موجودہ حکومت فوری طور پر سابقہ دور میں منظور کردہ نادرا آفس کو فعال بنائیں گے مگرموجودہ حکومتی ایم پی اے اور ایم این اے نے نادرا آفس پرانے جگہ سے تبدیل کر کے ایک دوسرے جگہ پر منتقل کر دیا جس پر سابقہ نادرا آفس کے زمین کے مالک نے کورٹ سے سٹے آرڈر لے لیا انکا کہنا تھا کہ جس جگہ پر موجودہ حکومتی نمائندوں نے دفتر شفٹ کیا ہے اس جگہ پر نادرا کے افسران بھی متفق نہیں انہوں نے مزید کہا کہ سٹے آرڈر لینے کے بعد نادرا اہلکاروں نے دفتر کا سامان کہیں اور شفٹ کر دیا ہے اور ایسی طرح میدان میں بننے والا نادرا آفس سیاست کی نذر ہو گئی انہوں نے چیف جسٹس آف پاکستان ،اور نادرا کے اعلی افسران سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ فوری طور پر میدان میں نادرا آفس کی قیام کو یقینی بنا کر ایسے سیاست کے نذر ہونے سے بچائے

مزید : پشاورصفحہ آخر