اعظم سواتی کی وزیر اعظم سے ملاقات ، وزارت سے مستعفی

اعظم سواتی کی وزیر اعظم سے ملاقات ، وزارت سے مستعفی

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) آئی جی اسلام آباد تبادلہ کیس میں ملوث وفاقی وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی اعظم سواتی نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دیدیا۔ذرائع کے مطابق اعظم سواتی نے اپنا موقف پیش کرنے کیلئے وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کی اور انہیں اپنا استعفیٰ پیش کیا، جسے وزیراعظم نے قبول کرلیا ۔ استعفے میں اعظم سواتی نے موجودہ حالات میں کام جاری رکھنے سے معذوری ظاہرکی، جبکہ وزیر اعظم سے ملاقات کے بعدسینیٹر اعظم سواتی نے مستعفی ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا استعفیٰ وزیراعظم نے بھی قبول کرلیا ہے۔اعظم سواتی کا کہنا تھا اپنے خلاف کیس کا بغیر عہدے کے سامنا کروں گا، وزیراعظم کو بتادیا عہدہ معنی نہیں رکھتا، انہوں نے عدالتی فیصلہ آنے تک کام جاری رکھنے کو کہا لیکن میں نے ان کو استعفیٰ منظورکر نے پرمنالیا،انہوں نے مزید کہا بغیر کسی اتھارٹی کے کیس میں پیش ہوکر دفاع کروں گاکہ موجودہ حالات میں وزارت کا قلمدان اپنے پاس نہیں رکھ سکتا،اخلاقیات کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے مستعفی ہو رہا ہوں،یاد رہے اعظم خان سوا تی کا آئی جی تبادلہ کیس سپریم کورٹ میں زیر سماعت ہے، اعظم خان سواتی پر الزام ہے انہوں نے سیاسی اثر ورسوخ استعمال کر کے آئی جی اسلام آباد کا تبادلہ کرایا، جے آئی ٹی رپورٹ بھی اعظم خان سواتی کیخلاف آئی ہے، اگر سپریم کورٹ نے 62ون ایف کے تحت کاروائی کی تو نہ صرف ان کی وزارت جائے گی بلکہ ان کی سینیٹ کی ممبر شپ بھی ختم ہو سکتی ہے۔

اعظم سواتی

مزید : صفحہ اول