ایڈزسے متاثرہ خاتون کی لاش برآمد ہونے پر گاؤں والوں نے تالاب خشک کر دیا

ایڈزسے متاثرہ خاتون کی لاش برآمد ہونے پر گاؤں والوں نے تالاب خشک کر دیا

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں ایک جھیل سے ایڈز کی مریض خاتون کی لاش برآمد ہوئی جس کے بعد پاس موجود قصبے کے لوگوں کے اصرار پر انتظامیہ نے جھیل کے ساتھ ایسا کام کرڈالا کہ سن کر آپ کی حیرت کی انتہاء نہ رہے گی۔ چینل نیوز ایشیاء کے مطابق یہ لاش بنگلور سے 440کلومیٹر دور موراب نامی قصبے کے قریب واقع ایک جھیل سے برآمد ہوئی، جس پر قصبے کے لوگوں میں شدید خوف وہراس پھیل گیا۔ ان کا خیال تھا کہ جھیل سے ایڈز کی مریض خاتون کی لاش ملی ہے چنانچہ اب جھیل کے پانی میں بھی ایچ آئی وی وائرس شامل ہو گیا ہے جو قصبے کے باسیوں کو لاحق ہو سکتا ہے۔رپورٹ کے مطابق قصبے کے لوگوں کے اس خوف کو ختم کرنے کے لیے انتظامیہ اس جھیل کا پانی نکال کر اسے خشک کرنے پر مجبور ہو گئی۔علاقے کے انتظامی عہدیدار ہوین ہلر کا کہنا تھا کہ ’’ہم نے قصبے کے لوگوں کو یہ یقین دلانے کی بہت کوشش کی کہ اس طرح ایڈز نہیں پھیلتا لیکن انہوں نے ہماری بات ماننے سے انکار کر دیا۔

مزید : صفحہ آخر