” میں صدمات سے گزر رہا ہوں اور لوگ مجھ سے یہ توقع کرتے ہیں کہ۔۔۔“ نوازشریف نے خاموشی توڑ دی، دل کی بات کہہ دی

” میں صدمات سے گزر رہا ہوں اور لوگ مجھ سے یہ توقع کرتے ہیں کہ۔۔۔“ نوازشریف نے ...
” میں صدمات سے گزر رہا ہوں اور لوگ مجھ سے یہ توقع کرتے ہیں کہ۔۔۔“ نوازشریف نے خاموشی توڑ دی، دل کی بات کہہ دی

  

اسلام آباد (ویب ڈیسک) مسلم لیگ (ن) کے قائد، سابق وزیراعظم نوازشریف نے کہا ہے کہ میں صدمات سے گزر رہا ہوں اور لوگ توقع کرتے ہیں کہ میں سڑکوں پر آکر احتجاج کروں اور نعرے لگاﺅں، عمران خان پر میں کیا بات کروں پوری دنیا ان پر باتیں کررہی ہے۔ وزیراعظم کے منہ سے قبل از وقت انتخابات کی بات سن کر عوام خوش ہیں کہ حکمرانوں سے جلد جان چھوٹنے کی امید نظر آرہی ہے ، پاکستان کی پارلیمانی تاریخ میں پہلی مرتبہ ایسا ہوا کہ 95فیصد فارم 45پر مجاز اتھارٹی کے دستخط نہیں ہیں اور فافن نے قومی اسمبلی کی 53سیٹوں پر دھاندلی کی تصدیق کی ہے۔

روزنامہ دنیا کے مطابق احتساب عدالت میں وقفہ کے دوران نوازشریف نے گفتگو کرتے ہوئے کہا فافن کے مطابق 53سیٹوں پر مسترد ووٹوں کی تعداد برتری سے زیادہ ہے یہ پارلیمانی تاریخ کا انوکھا واقعہ ہے ، نوازشریف نے کہا کہ ہم سنجیدہ لوگ ہیں ملکی معاملات اور ترقی کے منصوبوں کو سنجیدگی سے چلایا جس کے نتیجہ میں بجلی، گیس کا بحران ختم ہوا ، دہشت گردی کا خاتمہ ہوا، کراچی میں رونقیں لوٹ آئیں، بلوچستان میں امن قائم کیا۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے منہ سے قبل از وقت انتخابات کی باتیں خود اپنے اوپر عدم اعتماد کا اظہار ہیں ،ہم نے بجلی کے تین منصوبوں میں 160ارب روپے کی بچت کی لیکن اس ملک میں شاباش دینے والا کوئی نہیں، ہمارے دور میں 2013سے 2017تک ڈالر کی قیمت مستحکم رہی،اب ڈالر کی قیمت کنٹرول نہیں ہو رہی وزیراعظم کہتے ہیں کہ ٹیلی ویژن چینلز سے پتہ چلا کہ ڈالر کی قیمت بڑھ گئی ہے یہ ہے ان کا طرزحکمرانی۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) 2013سے زیادہ قوت کے ساتھ انتخابات کیلئے تیار ہے ، تحریک انصاف عوام کو سبز باغ دکھاتی رہی ہے ،ہم ذمہ دار لوگ ہیں، لوگ میری اور شہبازشریف کی حکومتوں کو یاد کررہے ہیں، سوشل میڈیا پر ہماری اور موجودہ حکومت کی کارکردگی کا روزانہ موازنہ کیا جاتا ہے ،ہمارے دور میں مہنگائی بہت کم تھی۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد