لاہور ائیرپورٹ پر پی آئی اے کی ملکیتی ہوٹل میں لاکھوں روپے کی کرپشن کا انکشاف

لاہور ائیرپورٹ پر پی آئی اے کی ملکیتی ہوٹل میں لاکھوں روپے کی کرپشن کا ...
لاہور ائیرپورٹ پر پی آئی اے کی ملکیتی ہوٹل میں لاکھوں روپے کی کرپشن کا انکشاف

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان انٹرنیشنل ائیرلائن (پی آئی اے ) کے لاہورائیرپورٹ  میں واقع ہوٹل میں لاکھوں روپےکی مبینہ خرد برد کا انکشاف،لاکھوں روپے کی کرپشن سوئمنگ پول اور شادی ہال کے لیے بکنگ کی مد میں کی گئی۔

نجی ٹی وی چینل’’ہم نیوز ‘‘ کے مطابق لاہور ائیر پورٹ پر پی آئی اے کی ملکیت ہوٹل میں بڑی کرپشن کا کیس سامنے آیا ہے جس میں سوئمنگ پول اور شادی ہال کی بکنگ کی مد میں قومی خزانے کو  لاکھوں روپے کا چونا لگایا گیا ہے،قوانین کے مطابق بکنگ کے لیے فکس کرایہ اور کمیشن کی ایڈوانس وصولی لازم ہے لیکن کرایہ اور کمیشن دونوں کی مد میں رعایت دیئے جانے کی رپورٹ سامنے آئی ہے جبکہ سوئمنگ پول اور شادی ہال  ہوٹل یا ملازمین کے نام پر 25 فیصد پر بھی بک کیے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔قوانین کے مطابق ائیرپورٹ استقبالیہ سے  کسی بھی رسید کا اجراء کرنا لازم ہے تاہم استقبالیہ کے بجائے رسیدیں مبینہ طور پرالگ سے جاری کی گئیں۔ فوڈ اینڈ بیوریج مینیجر بطورپارٹیزانچارج مبینہ رسیدیں جاری کرنے میں شامل ہیں جبکہ  آڈٹ کے وقت رسید بک سے ہٹ کر دیگر نمبروں کی مبینہ رسیدیں پیش کی گئیں۔واضح رہے کہ لاہور ائیرپورٹ پر واقع ہوٹل کی بکنگ میں رعایت دینے کا اختیار صرف کمپنی بورڈ کے پاس ہے جبکہ کل رقم وصول کیے جانے کے بعد اکاؤنٹ میں واجب رقم جمع کرائی گئی۔دوسری طرف 

لاہور ائیر پورٹ پر واقع ہوٹل کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر عامر مسعود سے موقف جاننے کے لے نجی ٹی وی نے رابطہ کیا تاہم ان سے رابطہ نہیں ہو سکا ۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور