چھپ چھپ کر تصویریں کھینچنے والے شخص کو لڑکیوں نے مزار قائد پر سبق سکھادیا

چھپ چھپ کر تصویریں کھینچنے والے شخص کو لڑکیوں نے مزار قائد پر سبق سکھادیا
چھپ چھپ کر تصویریں کھینچنے والے شخص کو لڑکیوں نے مزار قائد پر سبق سکھادیا

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) کراچی میں مزار قائد پر چھپ چھپ کر لڑکیوں کی تصاویر لینے والے ایک اوباش نوجوان کو لڑکیوں نے گھیر لیا اور ایسا کام کر ڈالا کہ کسی کو منہ دکھانے لائق نہ رہا۔ ویب سائٹ ’پڑھ لو‘ کے مطابق تین لڑکیاں، جن میں دو بہنیں تھیں، مزار قائد پر گئیں جہاں انہوں نے دیکھا کہ یہ نوجوان غیرمحسوس طریقے سے ان سمیت دیگر لڑکیوں کو تصاویر بنا رہا تھا۔ شک گزرنے پر انہوں نے اس پر نظر رکھی اور پھر رنگے ہاتھوں پکڑ لیا۔

تینوں لڑکیوں نے اس شخص کو گھیرلیا اور اس کو کھری کھری سنانی شروع کر دیں۔ اس دوران ان میں سے ایک لڑکی یہ تمام مناظر اپنے موبائل فون پر فلماتی رہی اور یہ ویڈیو انہوں نے بعد ازاں سوشل میڈیا پر پوسٹ کر دی۔ اس ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ لڑکیاں اس نوجوان سے اس کا فون لیتی ہیں اور اس میں دیکھتی ہیں تو معلوم ہوتا ہے کہ اس نے ان تینوں کی تین تصویریں بنا رکھی تھیں۔ جب وہ اسے یہ تصاویر دکھاتی ہیں تو وہ معافیاں مانگنے لگتا ہے اور کہتا ہے کہ غلطی سے یہ تصاویر بن گئی۔ آئندہ ایسا نہیں کرے گا۔ویڈیو میں ایک لڑکی دیکھنے والوں کو مخاطب ہو کر کہتی ہے کہ جو کوئی اس لڑکے کو پہچانتا ہے وہ اس ویڈیو کو اس کے گھر والوں تک پہنچائے تاکہ انہیں معلوم ہو کہ یہ باہر کیا غلیظ حرکت کرتا پھر رہا ہے۔رپورٹ کے مطابق یہ ویڈیو ماریہ سومرو نامی لڑکی نے اپنے فیس بک اکاﺅنٹ پر پوسٹ کی ہے جس کے ذریعے اس ہوس زادے کی کرتوت پورے ملک تک پہنچ گئی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس