سری لنکا کیخلاف ہوم سیزیرکیلئےقومی ٹیسٹ ٹیم کا اعلان،فواد عالم 10 سال بعد قومی سکواڈ میں شامل

سری لنکا کیخلاف ہوم سیزیرکیلئےقومی ٹیسٹ ٹیم کا اعلان،فواد عالم 10 سال بعد ...
سری لنکا کیخلاف ہوم سیزیرکیلئےقومی ٹیسٹ ٹیم کا اعلان،فواد عالم 10 سال بعد قومی سکواڈ میں شامل

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)سری لنکا کیخلاف ہوم سیزیرکیلئے قومی ٹیسٹ ٹیم کا اعلان کردیاگیا،اظہر علی قومی ٹیسٹ ٹیم کے کپتان برقرار جبکہ فوادعالم کو 10 سال بعد قومی سکواڈ میں شامل کرلیاگیا۔

قومی ٹیم کے چیف سلیکٹر و ہیڈکوچ مصباح الحق نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ 10 سال کے بعد پاکستان میں ٹیسٹ سیریز ہورہی ہے ،سری لنکا کے خلاف ہوم ٹیسٹ سیریز اہمیت کی حامل ہے ،ہماری توجہ سری لنکن سیریز پر ہے ،کوشش ہے کسی طرح وننگ ٹریک پر واپس آئیں ۔مصباح الحق کاکہنا ہے کہ مجھ سے متعلق ون مین شو کی باتیں غلط ہیں ،عام تاثر یہ ہے کہ میں اکیلے فیصلے کرتا ہوں ایسا بالکل نہیں ،میٹنگ میں بہت سی چیزیں دیکھی ہیں 6 سلیکٹر ہیں جوکھلاڑیوں کو نزدیک سے دیکھ رہے ہیں۔

چیف سلیکٹر نے کہاکہ ٹیم میں زیادہ تبدیلیاں نہیں کیں،ٹیم میں دو تبدیلیاں کی گئی ہیں ،فوادعالم کو افتخار احمد کی جگہ ٹیم میں شامل کیاگیا ہے ،فوادعالم پچھلے 6 سال سے مسلسل کارکردگی دکھا رہا ہے ،عثمان شنواری باﺅلنگ میں محنت کر رہے ہیں موسیٰ خان ٹیم میں شامل نہیں لیکن ٹیم کے ساتھ رہیں گے،انہوںنے کہا کہ اس وقت ہماری باﺅلنگ ہمارا مسئلہ ہے ،2 سینئر کھلاڑی ٹیسٹ فارمیٹ چھوڑ گئے ہیں ۔

قومی ٹیسٹ سکواڈ کا اعلان کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ اظہر علی سری لنکا کیخلاف قومی ٹیسٹ ٹیم کی کپتانی کریں گے ،فوادعالم کو بھی قومی سکواڈ میں شامل کیاگیا ہے ،انہوں نے کہاکہ اظہر علی ،عابدعلی ،اسدشفیق،بابراعظم ٹیم میں شامل ہیں ،محمد رضوان ،نسیم شاہ ،شاہین شاہ آفریدی،شان مسعود،یاسر شاہ ،عثمان شنواری سکواڈکا حصہ ہیں اس کے علاوہ حارث سہیل،امام الحق ،عمران خان اور کاشف بھٹی بھی ٹیسٹ ٹیم کا حصہ ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے بنیادی طور پر 3 اوپنر سلیکٹ کئے تھے،اس سے بہتر سلیکشن نہیں ہوسکتی جہاں آپ کے 2 پلیئر بیٹھے ہوں،ایمانداری سے ایک چیز ٹھیک کرنے کی کوشش کررہا ہوں جس نے جو کہناہے کہتا رہے ،انہوں نے کہا کہ میرے پاس کوئی جادو کی چھڑی نہیں کہ یکدم سب کچھ ٹھیک ہوجائے ،جہاں ضروری تھا وہاں تبدیلیاں کی گئیں ،ہم ٹیسٹ کرکٹ کم اور بڑے وقفے کے بعد کھیل رہے ہیں ،آسٹریلیامیں مشکل کنڈیشنزمیںکھیل کرآئے ہیں ٹیسٹ چیمپئن شپ میں اوپرجانے کیلئے 4 ٹیسٹ میچ بہت اہم ہیں ۔

مصباح الحق نے کہاکہ بابراعظم دورہ آسٹریلیا کے بعداس پوزیشن میں ہے کہ اس پر اعتماد کرسکتے ہیں،انہوںنے کہا کہ بطور ہیڈکوچ جس فارمیٹ میں کھلاڑی کھیل رہے ہیں ان کا پتہ ہوناچاہئے،افتخاراحمد نے وائٹ بال میں بہت اچھاپرفارم کیا ہے،شاہین ہے یا نسیم شاہ،انہیں کرکٹ چاہئے ان کا باﺅلنگ میں فیوچر برائٹ ہے ،ہیڈکوچ نے کہاکہ شاہین واحد باﺅلر ہے جو 140 کی سپیڈسے گیندیں کررہاتھا۔

مزید : کھیل


loading...