احتساب عدالت کارہائشی منصوبے کے نام پر شہریوں سے فراڈ کے ملزم کی 2 ارب روپے سے زائد رقم پلی بارگین کی درخواست منظور کرنے سے انکار

احتساب عدالت کارہائشی منصوبے کے نام پر شہریوں سے فراڈ کے ملزم کی 2 ارب روپے سے ...
احتساب عدالت کارہائشی منصوبے کے نام پر شہریوں سے فراڈ کے ملزم کی 2 ارب روپے سے زائد رقم پلی بارگین کی درخواست منظور کرنے سے انکار

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)احتساب عدالت نے رہائشی منصوبے کے نام پر شہریوں سے فراڈ کے ملزم کی 2 ارب روپے سے زائد رقم پلی بارگین کی درخواست فوری منظور کرنے سے انکارکردیا،عدالت نے ملزم آدم جوکھیو کو رہا کرنے کی نیب کی استدعا مسترد کرتے ہوئے 10دسمبر تک ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔

تفسیلات کے مطابق رہائشی منصوبے کے نام پر شہریوں سے فراڈ کرنے والا ملزم آدم جوکھیو 2ارب روپے سے زائد رقم پلی بارگین کے ذریعے دینے پررضامندہوگیا،نیب نے ملزم کو احتساب عدالت میں پیش کردیااورملزم کی پلی بارگین کے ذریعے رہائی کی استدعاکردی،عدالت نے کہا کہ ملزم پہلے متاثرین کو الاٹمنٹ شدہ زمین دے پھر پلی بارگین کی درخواست پر فیصلہ کریں گے،عدالت نے نیب پراسیکیوٹر اورتفتیشی افسرسے استفسارکیا کہ لوٹنے کاجرم کس نے کیا؟عدالت نے تفتیشی افسرکو جھاڑپلاتے ہوئے کہاکہ جرم کمپنی کرتی ہے یا فرد ؟کسے بیوقوف بنا رہے ہو؟احتساب عدالت نے ملزم کی پلی بارگین کی درخواست فوری منظور کرنے سے انکارکرتے ہوئے رہا کرنے کی نیب کی استدعا مسترد کردی،عدالت نے ملزم آدم جوکھیو کو 10 دسمبر تک کے عدالتی ریمانڈ پر جیل بھیج دیااورپلی بارگین کی درخواست پر نیب پراسیکیوٹر اور ملزم کے وکیل سے 10 دسمبر کو دلائل طلب کرلئے،واضح رہے کہ ملزم نے 1992میں رہائشی منصوبوں کے نام پر شہریوں سے رقم لی اور پلاٹ نہیں دیئے۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی


loading...