مریم نوازکی ای سی ایل سے نام نکالنے کی درخواست، حکومتی جماعت کا موقف بھی آگیا

مریم نوازکی ای سی ایل سے نام نکالنے کی درخواست، حکومتی جماعت کا موقف بھی آگیا
مریم نوازکی ای سی ایل سے نام نکالنے کی درخواست، حکومتی جماعت کا موقف بھی آگیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)مریم نوازکی ای سی ایل سے نام نکالنے کی درخواست پرحکومتی سینیٹر فیصل جاوید نے ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ نوازشریف کیلئے لندن مفروربیٹے موجودہیں تومریم نوازکووہا ں جانے کی کیاضرورت ہے؟دنیا نیوز کے مطابق انہوں نے کہا مریم نواز کوواپس جیل میں ہوناچاہیے۔

یاد رہے سابق وزیراعظم نوازشریف کی صاحبزادی اور مسلم لیگ ن کی سینئر رہنما مریم نواز نے ای سی ایل سے نام نکالے جانے کیلئے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست کردی ہے۔درخواست میں مریم نواز نے چھ ہفتوں کیلئے بیرون ملک جانے کی اجازت مانگی ہے جبکہ عدالت نے بھی درخواست سماعت کیلئے منظورکرتے ہوئے پیر کو سماعت مقررکردی ہے۔

اپنے وکیل کی وساطت سے دائر کی گئی درخواست میں مریم نے کہا کہ ای سی ایل میں ان کا نام بغیر کسی نوٹس کے ڈالا گیاہے۔انہوں نے کہا والد کی بیماری کے باعث وہ ذہنی دباوکا شکار ہیں ، انہیں ان کی ضرورت ہے۔والدہ کی وفات کے بعد نوازشریف کی دیکھ بھال وہ ہی کرتی ہیں۔اورنواز شریف انہی پر ہی انحصار کرتے ہیں۔حتمی فیصلہ آنے تک چھ ہفتوں کیلئے بیرون ملک جانے کی اجازت دی جائے اور پاسپورٹ واپس کیا جائے۔ درخواست میں وفاقی حکومت ، چیئرمین نیب اور دیگر کو فریق بنایا گیاہے۔مریم نوازشریف کی درخواست کو لاہور ہائیکورٹ نے سماعت کیلئے منظور کرلیا ہے اور پیرکو پیر کو جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں دو رکنی بینچ سماعت کرنے گا۔ان سے قبل ان کے والد میاں نوازشریف نے بھی ای سی ایل سے نام نکالنے کیلئے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کیا جہاں فیصلہ ان کے حق میں آیا تھا۔

مزید : اہم خبریں /قومی


loading...