جعلی پیر نے مطلقہ سے شادی کرلی، خاتون کے پہلے شوہر سے پیدا ہونے والے 2 بچے نہر میں ڈبو کر قتل کردیے ، دل دہلا دینے والی تفصیلات سامنے آگئیں

جعلی پیر نے مطلقہ سے شادی کرلی، خاتون کے پہلے شوہر سے پیدا ہونے والے 2 بچے نہر ...
 جعلی پیر نے مطلقہ سے شادی کرلی، خاتون کے پہلے شوہر سے پیدا ہونے والے 2 بچے نہر میں ڈبو کر قتل کردیے ، دل دہلا دینے والی تفصیلات سامنے آگئیں

  



فیصل آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)فیصل آبادکے جعلی پیرنے مطلقہ خاتون سے شادی کے بعدپہلے ایک سوتیلےبچے کونہرمیں پھینک کرمارنے کے بعددوسرے کوبھی جڑانوالہ کی نہرمیں پھینک کرماردیااورتھانہ منصورآبادمیں اغواکامقدمہ درج کروادیاتاہم تفتیش کے بعداُس نے دونوں بچوں  کے قتل کااعتراف کرلیا۔

نجی ٹی وی  کے مطابق منصورآبادکے رہائشی ذین شاہ نے ڈسکہ کی ایک خاتون سے شادی کی جس سے پہلے خاوندکے6بچے تھے4پہلے خاوندکے پاس اور2بچے خاتون  کے پاس تھے۔پولیس کے مطابق  زین عباس شاہ نامی جعلی پیر نے4دسمبرکو تھانہ منصورہ آباد میں اپنی سوتیلی بیٹی نور فاطمہ کے اغوا کا مقدمہ  درج کرایا، پولیس نے مقدمے درج کرکے تفتیش شروع کی، شواہد اور شک کی بنیاد پر پولیس نے زین عباس شاہ کو گرفتارکرکے تحقیقات کیں تو ملزم نے اعتراف جرم کرلیا۔ملزم نے اعتراف جرم کرتے ہوئے کہا کہ 9ماہ پہلے بھی اُس نے اپنے  ایک سوتیلے بچے کوڈسکہ کی نہرمیں پھینک کرماردیاتھااوراَب اس بچے کی بہن کم سن نورفاطمہ کوبھی نہرمیں پھینک کرماردیا،غوطہ خور کئی گھنٹے تک نعش تلاش کرتے رہے مگراس کاسراغ نہ مل سکا۔پولیس نے ملزم کوحراست میں لے کراس کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /فیصل آباد


loading...