تحریک کا بعد حکمران اپوزیشن سے این آر او مانگ رہے ہیں، افتخار خان 

  تحریک کا بعد حکمران اپوزیشن سے این آر او مانگ رہے ہیں، افتخار خان 

  

 خان گڑھ(نمائندہ پاکستان)پاکستان پیپلزپارٹی جنوبی پنجاب کے سیکرٹری انفارمیشن و رکن قومی اسمبلی نوابزادہ افتخار احمد خان نے گزشتہ روز اپنی رہائش گاہ " سیف نگر " خان گڑھ میں پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ جعلی اور سلیکیٹڈ حکومت کے خلاف پی ڈی ایم  اسلام آباد لانگ مارچ اور اسمبلیوں سے استعفوں کا معاملہ بھی زیر غور ہے انہوں نے کہا کہ نااہل کپتان اور ان کی نااہل ٹیم بس اپوزیشن پر اوچھے ہتھکنڈوں ' بھونڈے الزامات ' مضحکہ خیز مقدمات اور پکڑ (بقیہ نمبر26صفحہ6پر)

دھکڑ کے علاوہ کچھ بھی کرنے کے قابل نہیں ہے انہوں نیکہا کہ حکومت نیب کے پیچھے چھپ کر اپوزیشن کو احتساب کے نام پر انتقام کا ڈرامہ رچا رہی ہے جبکہ جمہوریت میں بہترین احتساب تنقید ہے جو نااہل حکمرانوں کو برداشت نہیں ہو رہی انہوں نیکہا کہ قومی اثاثوں کی جگ ہنسائی کرنے والے حکمران ہوش کے ناخن لیں کیونکہ تباہی خان کی پالیساں ملک کیلئے زہرقاتل ثابت ہوئی ہیں انہوں نیکہا کہ اب حکمران اپوزیشن سے این آر او مانگ رہے ہیں مگر اپوزیشن این آر او نہیں دے گی بلکہ نااہل حکمرانوں کو عوام سے نجات دے کر ہی دم لیں گے نوابزادہ افتخار احمد خان کا کہنا تھا کہ ملک میں ایک بار پھر مہنگائی میں اضافہ کردیا گیا ہے جس سے ہر طبقہ ہائے متاثر ہو رہا ہے جبکہ پی ڈی ایم 13 دسمبر کو مینار پاکستان میں ہر صورت جلسہ عام کرے گی حکمران اب عوامی بات اور عوامی احتجاج کو برداشت کریں انہوں نیکہا کہ 22 کروڑ عوام وزیراعظم عمران خان اور اس کی نااہل ٹیم سے نجات کیلئے نوافل ادا کررہے ہیں۔

افتخار احمد

مزید :

ملتان صفحہ آخر -