ملک بھر میں کورونا کی دوسری لہر بے قابو، مزید 58اموات،3308نئے کیس، پشاور خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں بروقت آکسیجن نہ ملنے پر کورونا کے 7مریض جاں بحق 

ملک بھر میں کورونا کی دوسری لہر بے قابو، مزید 58اموات،3308نئے کیس، پشاور خیبر ...

  

 اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ملک میں کورونا کی دوسری لہر بے قابو ہو نے لگی، گزشتہ روز مزید 58 افرادجاں بحق ہونے سے اموات کی مجموعی تعداد 8 ہزار 361 تک جاپہنچی۔این سی او سی کے مطابق 24 گھنٹے میں تین ہزار 308 نئے مریض سامنے آئے ہیں، مہلک وائرس سے 4 لاکھ 16 ہزار 499 شہری متاثر ہو چکے جبکہ ایکٹو کیسز کی تعداد 53 ہزار 126 تک پہنچ چکی ہے۔اعداد و شمار کے مطابق ملک بھر میں گزشتہ روز41 ہزار 645 کورونا ٹیسٹ کیے گئے جبکہ ملک بھر میں کورونا سے متاثر 2 ہزار 436 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے جبکہ 3 لاکھ 55 ہزار 12 افراد صحت یاب ہو چکے ہیں۔خیبرپختونخوا میں کورونا کی دوسری لہرمیں شدت پیدا ہورہی ہے، صوبہ میں دوسری لہر کے دوران متاثرہ افراد کی تعداد 4 ہزار کے قریب ہو گئی، کیسز میں اضافے کے باوجود شہریوں کی بے اعتنائی اورغیرسنجیدگی بھی عروج پر ہے۔  محکمہ صحت کی رپورٹ کے مطابق ایک ہی دن میں مختلف ہسپتالوں میں کورونا کے 10 مریضوں نے دم توڑدیا۔جبکہ حیدآباد میں ضلعی انتظامیہ نے تحصیل سٹی، لطیف آباد، قاسم آباد اور ٹنڈوجام کے 12علاقوں میں آج سے اسمارٹ لاک ڈاؤن لگانے کا اعلان کردیا ہے۔ضلعی انتظامیہ کے مطابق ضلع بھر کی 6 یوسیز کے بارہ علاقوں میں سات دسمبر سیاسمارٹ لاک ڈاؤن لگایا جائے گا۔ادھر اسلام آباد کی ضلعی انتظامیہ نے نماز جمعہ کے دوران کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر فیصل مسجد کا اندرونی ہال سیل کردیاہے۔ جس کے بعد مسجد کے اندرونی حال میں باجماعت نماز ادا نہیں کی جاسکے گی۔ملک بھر میں کورونا کے مثبت کیسز کی شرح7.94 فیصد ہوگئی ہے۔این سی اوسی کے مطابق میر پور میں مثبت کیسز کی شرح سب سے زیادہ 22 فیصد ریکارڈ کی گئی۔کراچی 17.39 فیصد کیساتھ پہلے اور پشاور 16.02 فیصد شرح کے ساتھ دوسرے،راولپنڈی میں شرح11.26 فیصد تک پہنچ گئی۔

کورونا کیس

پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک، نیوزایجنسیاں) وزیر صحت خیبرپختونخوا تیمور سلیم جھگڑا کا کہنا ہے کہ خیبرٹیچنگ اسپتال میں آکسیجن سلنڈرز بروقت نہ پہنچنے پر کورونا کے 7 مریض جاں بحق ہو گئے۔صوبائی وزیر صحت تیمور سلیم جھگڑا کا کہنا ہے کہ ہسپتال کے بورڈ آف گورنر کو 2 روز کے اندر انکوائری و ایکشن کا کہا گیا ہے۔تیمور سلیم جھگڑا نے مزید کہا کہ مطمئن نہ ہونے کی صورت میں حکومت خود اپنی آزادانہ انکوائری کرائے گی۔دوسری جانب خیبر ٹیچنگ اسپتال کے ترجمان فرہاد خان کا کہنا ہے کہ ہسپتال میں کورونا مریضوں کیلئے 106 بیڈز مختص ہیں،  ہر مریض کو آکسیجن کی ضرورت رہتی ہے۔ناگزیر وجوہات کی بنا پر آکسیجن سلنڈرز کی فراہمی بروقت نہ ہو سکی، واقعے کی تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں۔

خبیر 

مزید :

صفحہ اول -