ایم کیو ایم کا لاپتہ کارکن 4 سال بعد قتل، لاش کی شناخت ہوگئی

ایم کیو ایم کا لاپتہ کارکن 4 سال بعد قتل، لاش کی شناخت ہوگئی
ایم کیو ایم کا لاپتہ کارکن 4 سال بعد قتل، لاش کی شناخت ہوگئی

  

کراچی (ویب ڈیسک) سرجانی ٹاﺅن تھانے کی حدود نا رد رن بائی پاس سے ملنے والی تشدد زدہ لاش ایم کیو ایم کارکن کی نکلی۔لاش کی شناخت کلیم عرف شاہدکے نام سے ہوئی ہے۔

پولیس کے مطابق اہل خانہ کا کہنا ہے کہ مقتول ایم کیو ایم کا کارکن اور موبائل ریپئرنگ کا کام کرتا تھا، اور مقتول کی اہلیہ عالیہ زوجہ محمد شاہد نے شوہر کے لاپتہ ہونے کا مقدمہ نمبر 78/2019 سپر مارکیٹ تھانے میں درج کرا دیا تھا۔

 اہلیہ کے مطابق مقتول کلیم عرف شاہد ایک بیٹی کا باپ اورمکان نمبر 1/281 رحمانیہ مسجد لیاقت آباد کا رہائشی تھا۔ 

9دسمبر 2016 کے روز میرے شوہر کے موبائل پر کسی کی کال آئی اور وہ گھر سے چلے گئے،کافی دیر تک نہ آنے پر موبائل فون پر کال کی تو موبائل بند جا رہا تھا۔

رات ہونے پر اہنے طور پر معلومات کی تو پتا چلا کچھ لوگ شوہر کو گاڑی میں بٹھاکر لے گئے، پولیس کے مطابق واقعہ کی تفتیش شروع کردی گئی ہے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -