سری لنکن شہری کی جان بچ سکتی تھی اگر۔ ۔ ۔ عدنان ملک کی بہن کا موقف بھی آگیا

سری لنکن شہری کی جان بچ سکتی تھی اگر۔ ۔ ۔ عدنان ملک کی بہن کا موقف بھی آگیا
سری لنکن شہری کی جان بچ سکتی تھی اگر۔ ۔ ۔ عدنان ملک کی بہن کا موقف بھی آگیا

  

سیالکوٹ (ویب ڈیسک) سیالکوٹ واقعے میں سری لنکن شہری پریانتھا کمارا کو مشتعل ہجوم سے بچانے کی کوشش کرنے والے ملک عدنان کی بہن  شمع سکندر  کا کہنا ہے کہ 'اگران کے بھائی کی طرح چند لوگ اور ہوتے تو سری لنکن شہری کی جان بچ جاتی'۔

واضح رہے کہ سوشل میڈیا پر سامنے آنے والی ویڈیوز میں دیکھاگیا کہ ملک عدنان جان ہتھیلی پر رکھ کر پریانتھا کمارا کو بچانےکی کوشش کررہےتھے۔ہجوم کے تشدد کے وقت ملک عدنان نے پریانتھا کمارا کوکَور کیا ہوا تھا اور وہ خود مار کھاتے رہے اور اسے بچانےکی کوشش کر تے رہے تھے ،سوشل میڈیا پر بھی ملک عدنان کی بہادری اور انسان دوستی کے جذبے کی تعریف کی جارہی ہے۔

خیال رہے کہ وزیراعظم عمران خان نے ملک عدنان کو تمغہ شجاعت دینے کا اعلان کیا ہے جب کہ پنجاب حکومت نے بھی ملک عدنان کو انسانی حقوق کا ایوارڈ دینےکا اعلان کیا ہے، چاردن قبل  سیالکوٹ کی سپورٹس گارمنٹ کی فیکٹری کے غیر مسلم سری لنکن منیجر پریانتھا کمارا پر فیکٹری ورکرز نے مذہبی پوسٹر اتارنے کا الزام لگا کر حملہ کردیا، پریانتھا کمارا جان بچانے کیلئے بالائی منزل پر بھاگے لیکن فیکٹری ورکرز نے پیچھا کیا اور چھت پر گھیر لیا۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -سیالکوٹ -