آزاد کشمیر میں سیاحت کا فروغ اورسٹیٹ آف دی آرٹ منصوبے ، بڑی پیش رفت سامنےآگئی

آزاد کشمیر میں سیاحت کا فروغ اورسٹیٹ آف دی آرٹ منصوبے ، بڑی پیش رفت سامنےآگئی
آزاد کشمیر میں سیاحت کا فروغ اورسٹیٹ آف دی آرٹ منصوبے ، بڑی پیش رفت سامنےآگئی

  

مظفرآباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) ٹورازم پروموشن ایکٹ  تر میمی بل 2021ء کے حوالے سے اہم اجلاس  پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی)کے صدر اور آزاد کشمیر کےسینئر وزیر سردار تنویر الیاس خان کی زیر صدارت ان  کےآفس  چیمبر  میں منعقد ہوا،جس میں  وزیر جنگلات اکمل سر گالہ،سینئرممبر  بورڈ  آف ریونیو  احسان خالد کیانی،سیکرٹریز حکومت منصور قادر  ڈار  ،  چوہدری امتیاز،ایڈیشنل سیکرٹری قانون   زاہد راجپوت شریک تھے۔

اجلاس میں  آزاد کشمیر میں سیاحت کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کر کے سٹیٹ آف دی آرٹ منصوبوں کی تعمیر کی جانب اہم پیش رفت،ریاست میں میگا پراجیکٹس کی شروعات میں حائل قانونی سقم ہائے کی درستگی کی لئے کابینہ کے فیصلے کی روشنی میں آزاد جموں و کشمیر ٹورازم پروموشن ایکٹ ترمیمی بل 2021ء کا جائزہ لیا گیا.اجلاس میں طے پایا کہ ٹورازم پروموشن ایکٹ کے حوالے سے فالواپ اجلاس جمعرات کو  دوبارہ منعقد کیا جائے گا  اور آزادکشمیر ٹورازم پالیسی کو جدید تقاضوں سے اہم آہنگ کیا جائے گا۔اس حوالے سے ایک جامع مسودہ قانون تیار کیا جارہا ہے جس کے تحت بین الاقوامی سیاحت کے لیے آزادکشمیر کے دروازے کھولے جائیں گے اور آزادکشمیر کے اندر سیاحوں کو ہر ممکن سہولیات فراہم کی جائیں گی۔

وزیر سیاحت صدر تحریک انصاف آزادکشمیر سردار تنویر الیاس کی زیر صدارت مجوزہ سیاحتی پالیسی ترمیمی ایکٹ 2021ء کو حتمی شکل دی جائے گی۔آزادکشمیر میں سیاحت کو انڈسٹری کا درجہ دینے کے لیے بھی سیاحتی پالیسی میں گنجائش نکالی جارہی ہے۔وزیراعظم پاکستان کے آزادکشمیر کے لیے مجوزہ 520ارب روپے کے کشمیر ترقیاتی پیکیج کا زیادہ حصہ سیاحت کے لیے مختص کیے جانے کا امکان ہے، اس مقصد کے لیے سیاحتی پالیسی میں قانونی رکاوٹیں دور کی جارہی ہیں.

مزید :

علاقائی -آزاد کشمیر -مظفرآباد -