"سیالکوٹ میں بہت برا ہوا جس پر سارا پاکستان رو رہا ہے" مولانا طارق جمیل ایک بار پھر بول اٹھے

"سیالکوٹ میں بہت برا ہوا جس پر سارا پاکستان رو رہا ہے" مولانا طارق جمیل ایک ...
سورس: File

  

فیصل آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) معروف عالمِ دین مولانا طارق جمیل کا کہنا ہے کہ سیالکوٹ میں بہت برا کام ہوا جس پر پورا پاکستان رو رہا ہے۔

نجی ٹی وی اے آر وائی نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے مولانا طارق جمیل نے سیالکوٹ واقعے پر کہا "سیالکوٹ میں بہت برا کیا جس پر  سارا پاکستان رو رہا ہے، یہ میری اکیلے کی نہیں بلکہ سب کی رائے ہے ، یہ جہالت اور ظلم کی انتہا ہے۔"

جنید جمشید کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا طارق جمیل نے بتایا کہ ان کی بے تکلفی آہستہ آہستہ شروع ہوئی۔ ایک بار وہ امریکی شہر لاس اینجلس میں جماعت کے ساتھ گئے ہوئے تھے تو وہاں سے جنید جمشید کو فون کیا ، جنید نے کہا کہ آپ کہاں سے بات کر رہے ہیں، میں نے بتایا کہ لاس اینجلس سے ، تو اس نے کہا کہ قسم کھائیں کہ آپ واقعی امریکہ میں ہیں۔ 

مولانا طارق جمیل کے مطابق ان دنوں لینڈ لائن پر رابطہ ہوتا تھا اور اس پر نمبر نہیں آتے تھے اس لیے جنید جمشید نے سمجھا کہ شاید فیصل آباد سے ہی فون کر رہا ہوں اس لیے اس نے قسم اٹھانے کو کہا۔

انہوں نے بتایا "میں  نے جنید جمشید کو کہا کہ دوپہر کا کھانا تیرے  گھر پر کھائیں گے، اس پر جنید کو یقین نہیں آیا اور کہا کہ جو مذہبی لوگ آتے ہیں وہ تو میرے گھر کا پانی بھی نہیں پیتے، ا س پر میں نے کہا کہ میں تو بہت کمزور ایمان کا آدمی ہوں ، تمہارے گھر کھانا کھا لوں گا، اس کے بعد جنید خود مجھے ایئر پورٹ پر لینے آیا۔جنید اکثر کہا کرتا تھا کہ مولوی صاحب اگر آپ شروع میں ہی مجھے فتوے سنانا شروع کردیتے تو شاید میں کبھی بھی موسیقی نہ چھوڑتا۔"

مزید :

قومی -