ضمانت منسوخی کی درخواستوں پروکلاء دلائل کیلئے 19 دسمبر کو طلب

 ضمانت منسوخی کی درخواستوں پروکلاء دلائل کیلئے 19 دسمبر کو طلب

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ کے مسٹرجسٹس ملک شہزاداحمد خان نے پٹرولیم بحال پیدا کرنے کے الزامات پر سابق چیئرپرسن اوگرا عظمیٰ عادل سمیت 6 شریک ملزمان کی ضمانت منسوخی کی درخواستوں پروکلاء کو دلائل دینے کے لئے 19 دسمبر کو طلب کرلیا عدالت عالیہ نے وفاقی حکومت کی درخواست پر سماعت کی،ملزمان میں عظمی عادل خان،سعید احمد،سہیل وسیم، شہزاد انجم اور سلیم بٹ شامل ہیں،دوران سماعت عظمی عادل کے وکیل نے عدالت کوبتایا کہ درخواست گزار خاتون بیمار ہے شوکت خانم میں چیک کروانے کے لے گئی ہیں،عدالت سے استدعاہے کہ ایک روزہ حاضری معافی کی درخواست منظور کی جائے جسے عدالت نے منظور کرلیا، وفاقی حکومت کی جانب سے دائر درخواست میں موقف اختیار کیا گیا کہ ٹرائل کورٹ نے ملزمان کی عبوری  ضمانتیں منظور حقائق کے برعکس منظور کیں،ملزمان تحقیقات میں ملوث پائے گئے، ملزمان کے خلاف کئی شواہد موجود ہیں،عدالت سے استدعاہے کہ ملزمان کی عبوری ضمانت منظوری کا حکم کالعدم قرار دیتے ہوئے ضمانتیں منسوخ کی جائیں۔

طلب 

مزید :

صفحہ آخر -