صدر مملکت کا فیصل مسجد میں خواتین کی نماز پر پابندی کا نوٹس، انتظامیہ سے وضاحت طلب 

صدر مملکت کا فیصل مسجد میں خواتین کی نماز پر پابندی کا نوٹس، انتظامیہ سے ...

  

 اسلام آباد (این این آئی)صدر مملکت عارف علوی نے فیصل مسجد میں خواتین کی نماز پر پابندی، صفائی کی ناقص صورتحال کی رپورٹ کا نوٹس لیتے ہوئے کہاہے کہ دنیا بھر کی مساجد میں مناسب اسلامی لباس اور سر ڈھانپ کر خواتین کو نماز پڑھنے کی اجازت ہے۔ جاری اعلامیہ کے مطابق صدرمملکت نے کہاکہ فیصل مسجد مذہبی اور سیاحتی اہمیت کی حامل ہے لیکن مرکزی ہال میں خواتین کیلئے نماز کی علیحدہ جگہ ہے اور نہ ہی اس میں داخلے کی اجازت ہے۔ عارف علوی نے کہاکہ ضعیف اور بیمار خواتین کو لفٹ نہ ہونے کی وجہ سے دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ صدر مملکت نے سوال اٹھایاکہ ان پابندیوں کا سامنا کرتے ہوئے خواتین اپنی نماز کیسے ادا کر پائیں گی؟۔میڈیا رپورٹ کے مطابق 14 ستمبر کومسجد میں خواتین کے نماز پڑھنے پر پابندی، صفائی اور دیکھ بھال کی ناقص صورتحال اور مسجد کے احاطے میں بھکاریوں کی موجودگی کی نشاندہی کی گئی تھی۔ صدر مملکت نے کہاکہ میری رائے میں خواتین کو مرکزی ہال میں مخصوص جگہ پر نماز ادا کرنے کی اجازت ہونی چاہیے، خواتین کو اس عظیم مسجد کی تعمیراتی خوبصورتی کو سراہنے کیلئے مرکزی ہال میں جانے کی بھی اجازت ہونی چاہیے۔ عارف علوی نے کہاکہ میری یہ رائے حرمین شریفین سمیت پوری دنیا کے مشاہدے پر مبنی ہے۔سی ڈی اے نے ایوان ِ صدر کو اپنی رپورٹ میں بتایا کہ صورتحال کی بہتری کیلئے اقدامات شروع کیے ہیں۔دعوۃاکیڈمی کی پالیسی کے تحت صرف ایک گیلری خواتین کیلئے مختص ہے، مرکزی ہال میں خواتین کو داخلے کی اجازت نہیں۔صدر مملکت نے خواہش ظاہر کی ہے کہ فیصل مسجد کے منتظم ان مسائل پر مزید وضاحت کریں۔

صدر مملکت

مزید :

صفحہ آخر -