اختیارات کا ناجائز استعمال، دھوکہ دہی من مانیاں، سابق وی سی زکریا یونیورسٹی ڈاکٹرعلقمہ اور دیگر ملزم نیب ریفرنس سے بری، پراسیکیوٹر کی شدید مخالفت احتساب عدالت کا دلائل ماننے سے انکار

اختیارات کا ناجائز استعمال، دھوکہ دہی من مانیاں، سابق وی سی زکریا یونیورسٹی ...

  

ملتان(خصو صی رپورٹر) احتساب عدالت ملتان کے جج صفدر اقبال نے بہاؤ الدین زکریا یونیورسٹی ملتان کے سابق وائیس چانسلر سید خواجہ  علقمہ سابق رجسٹرار ملک منیر حسین، عقیل طفیل، محمد گلستان،جویریہ رسول،سدرہ شفیع،مظہر اقبال،منیر احمد بھتی،عبدالعلیم بھتی(بقیہ نمبر40صفحہ6پر)

، اور حمزہ منیر بھتیکے خلا ف نیب کے دائیر کردہ ریفرنس نمبر 53/2016 میں  بری کردیا ہے۔معروف قانون دان حسنین رضا باروی۔ اسد منظور بٹ طلال مشتاق نے دلائیل دیتے ہوئے کہا کہ قومی احتساب بیورو کے نئے قانون کے مطابق وہ ملزمان کے زمرے میں نہیں آتے۔اور نہ ہی ان کا اقدام قابل دست اندازی نیب ہے۔ اور نہ ہی ان پر اختیارات کا ناجائز استعمال کرنے، دھوکہ دہی کرنے اور بلا اجازت لاہور میں بی زیڈ یو کا کیمپس قائم کرنے کا الزام ثابت ہوا ہے۔یہ کیمپس حکومت پنجاب کی منظوری سے قائم ہوا تھا تاہم یہ بات درست ہے کہ ہائیر ایجوکیشن کمیشن سے منظوری نہیں لی گئی اور نہ ہی پنجاب یونیورسٹی سے عدم اعتراض کا سرٹیفیکیٹ لیا گیا۔اس کیس میں وائس چانسلر سید خواجہ  علقمہ سابق رجسٹرار ملک منیر حسین گرفتار رہے جو بعد ازان ضمانت پر رہا ہوئے نیب کے پراسیکیوٹر سید اسد عباس نے مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ یہ معاملہ مزید تحقیق کا متقاضی ہے اس لیئے ملزماں کی بریت نہ کی جائے۔مگر فاضل عدالت نے ان سے اتفاق نہیں کیا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -