70 سال بعد بھی دنیا کے نقشے پر ہمیں کوئی اہمیت نہیں دیتا،اسلام آباد ہائیکورٹ کا عافیہ صدیقی کی رہائی کا معاملہ امریکی سفیر کیساتھ اٹھانے کا حکم

70 سال بعد بھی دنیا کے نقشے پر ہمیں کوئی اہمیت نہیں دیتا،اسلام آباد ہائیکورٹ ...
70 سال بعد بھی دنیا کے نقشے پر ہمیں کوئی اہمیت نہیں دیتا،اسلام آباد ہائیکورٹ کا عافیہ صدیقی کی رہائی کا معاملہ امریکی سفیر کیساتھ اٹھانے کا حکم

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اسلام آبادہائیکورٹ نے عافیہ صدیقی کی رہائی سے متعلق کیس میں ریمارکس دیتے ہوئے کہاہے کہ 70 سال بعد بھی دنیا کے نقشے پر ہمیں کوئی اہمیت نہیں دیتا، ہم صرف بیٹھ کر افسوس کرنے علاوہ کچھ نہیں کر سکتے۔

نجی ٹی وی چینل ایکسپریس نیوز کے مطابق امریکا میں قید عافیہ صدیقی کی رہائی کے کیس میں بڑی پیشرفت ہوئی،اسلام آباد ہائیکورٹ نے معاملہ پاکستان میں امریکی سفیر کیساتھ اٹھانے کا حکم دیدیا۔

عدالت نے عافیہ صدیقی کی رہائی کی کوششوں پر عدم اطمینان کااظہارکرتے ہوئے وزیر خارجہ، سیکرٹری خارجہ کے دستخط کیساتھ رپورٹ آئندہ سماعت پر جمع کرانے کا حکم دیدیا،عدالت نے کہاکہ دیکھنا چاہتے ہیں پاکستان میں امریکی سفیرکا اس پر کیا ردعمل ہے ۔

وزارت خارجہ کی رپورٹ اسلام آباد ہائیکورٹ میں پیش کردی گئی، جسٹس اعجاز اسحاق خان نے کہاکہ 17 اکتوبر کے عدالتی آرڈر کے بعد آپ نے کچھ نہیں کیا، عدالت نے کہاکہ دفتر خارجہ کی جانب سے صرف خطوط لکھے گئے لیکن فالو اپ نہیں لیاگیا،آپ کہہ دیں کہ کچھ نہیں کر سکتے تو ہم پٹیشن پر فیصلہ سنا دیتے ہیں ،عدالت نے کیس کی سماعت 21 جنوری تک ملتوی کردی گئی ۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -اسلام آباد -