سانوں ایک پل چین نہیں آوے سجنا ں تیرے بناء۔۔۔ راحت فتح علی خاں شو میں دنیا کے تمام ممالک کی مسلم کمیونٹی، ہندو اورسکھ موجود تھے

سانوں ایک پل چین نہیں آوے سجنا ں تیرے بناء۔۔۔ راحت فتح علی خاں شو میں دنیا کے ...
سانوں ایک پل چین نہیں آوے سجنا ں تیرے بناء۔۔۔ راحت فتح علی خاں شو میں دنیا کے تمام ممالک کی مسلم کمیونٹی، ہندو اورسکھ موجود تھے

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

مصنف:ع۔ غ۔ جانباز 
قسط:38
31-8-2018
جاوید صاحب کے ہاں دعوت 
Mississauga کی ہی ایک ذیلی آبادی میں جاوید صاحب کے گھر ہم رات کو 9 بجے پہنچے۔ جاوید صاحب چہرے پر ایک دائمی مسکراہٹ سجائے چشمِ راہ تھے۔ جاوید صاحب کی فیملی، والدہ، ایک خوش مزاج بیگم اور 3 بیٹوں پر مشتمل ہے۔
بات چیت پاکستان کے معرض وجود میں آنے سے پہلے مشرقی پنجاب میں اُن کی اور ہماری فیملز کی سکونت کے گرد گھومتی رہی۔ جواُس وقت ضلع جالندھر کے شہر لدھیانہ اور نواں شہر کے مضافات تک محدود تھی۔ پھر گفتگو کا رُخ اُن کے لڑکے کی طرف مُڑ گیا۔ جو انٹر پاس کرنے کے بعد مکینکل کے شعبے میں انٹرنشپ کر رہا ہے۔ جو بس سے وہاں چلا جاتا ہے اور خوب دل لگا کر کام کر رہا ہے۔ چھوٹا لڑکا چلبلا سا اِدھر اُدھر گھومتا رہا۔
کھانا لگا تو دعوتِ طعام دی گئی۔ سبھی نے وہاں ٹیبل سے کھانا لیا اور شکم پروری شروع کردی۔ کھانا بڑا لذیذ تھا۔ اس میں چکن، مٹن قورمہ، چنے، سلاد، پلاؤ، فش، نان وغیرہ، کوک اور سپرائٹ۔ سب نے خوب سیر ہو کر کھایا۔ پھر کھیر کا دور چلا اور کچھ وقفہ سے پھر چائے پیش کی۔
اِس طرح رات کوئی 10 بجے میزبان سے اجازت چاہی اور گھر آکر سیدھے اپنے اپنے بیڈ رومز میں جا دھمکے۔ 
Muslim Fest a Huge Success
یہ 3 روزہ میلہ 31 اگست سے 2 ستمبر تک منعقد کیا گیا۔ ہم نے شام کو وزٹ کیا۔ محترمہ زاہدہ جلال نے اس کا آغاز کرتے ہوئے سب کو خوش آمدید کہا۔ معروف اینکر پرسن وسیم بادامی نے کمپیئرنگ کی۔ فوڈ سٹالز، کامیڈی شو، فوارے، بچوں کے کھیل، مذہبی کتب کی نمائش وغیرہ۔ وہاں یہ اجاگر کرنے کی سعی کی گئی کہ ہم حصول تعلیم کو ایک فن کے طور پر اور ذوق ظرافت کے ساتھ حاصل کرنے کو ترجیح دیتے ہیں۔ جس سے ایک با معنی تفریح کا سامان مہیّا ہوسکے۔ اس سے ہماری کمیونٹی میں مزید روابط کا اضافہ ہوگا۔ یہ سب باتیں ایونٹ، ڈائریکٹر طارق سیّد نے اپنے خطبہ صدرت میں کیں۔
یہاں عربی فن خطّاطی پر ایک ورکشاپ اور کاغذ سے بنے فن پاروں کی نمائش کا اہتمام کیا گیا تھا اور وہاں یاد رہے کہ پیٹ پوجا کے لیے بھی خاصا اہتمام کیا گیا تھا۔ اِس کے علاوہ ترکی کے بنے ملبوسات اور مشرق وسطیٰ کے بنے زیورات بھی نمائش میں شامل تھے۔ 
01-09-2018
راحت فتح علی خاں شو 
(شام 8 تا 12 بجے)
یہ پروگرام "Burnham Throp Community Centre" میں ترتیب دیا گیا تھا۔ دنیا کے تمام ممالک کی مسلم کمیونٹی، ہندو، سکھ، اس شو میں موجود تھے۔ مقررّہ سٹیج کے علاوہ اس کے اوپر ایک بڑی قدِ آدم سکرین لگا کر پروگرام کو بار بار اُس پر دکھا کر اس کا حسن دوبالا کیا جا رہا تھا۔
شروع میں انتظامیہ کی طرف سے معذرت پیش کی کہ جہاز لیٹ ہوجانے کی وجہ سے پروگرام میں تھوڑی سی دیر ہوگئی جس کے لیے ہم معذرت خواہ ہیں۔ راحت فتح علی خان نے حمد باری تعالیٰ ”اللہ اللہ“ سے آغاز کیا اور پھر نعت رسول مقبول ؐ پیش کی۔ پھر اس کے بعد ریگولر قوالی شروع ہوئی۔ 
سانوں ایک پل چین نہیں آوے سجنا ں تیرے بناء……
میں نے معصوم بہاروں میں تجھے دیکھا ہے
 دل لگا کر تو دیکھو
کافی رات گئے پروگرام اختتام پذیر ہوا تو ہم نے گھر کی راہ لی اور جلد ہی سو گئے۔ (جاری ہے)
نوٹ: یہ کتاب ”بُک ہوم“ نے شائع کی ہے۔ ادارے کا مصنف کی آراء سے متفق ہونا ضروری نہیں۔(جملہ حقوق محفوظ ہیں)

مزید :

ادب وثقافت -