پاکستان میں جمہوریت کیساتھ پارلیمنٹ یرغمال ہے،یہاں سیاست نہیں تجارت ہوتی ہے،سراج الحق

پاکستان میں جمہوریت کیساتھ پارلیمنٹ یرغمال ہے،یہاں سیاست نہیں تجارت ہوتی ...

 اسلام آباد (آئی این پی )جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق نے کہاہے کہ پاکستان میں جمہوریت کے ساتھ پارلیمنٹ بھی یرغمال ہے،یہاں سیاست نہیں تجارت کی جاتی ہے، مغلوں اور انگریزوں کے دور سے حکمرانی کرانے والے خاندان بر سراقتدار ہیں، اگر جماعت اسلامی اسٹیبلشمنٹ کی اتحادی ہوتی تو پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ کی طرح اقتدار میں ہوتی ، ایم کیو ایم تشدد اور طاقت کی سیاست ترک کردے تو ان کے ساتھ چلنے کو تیار ہیں ۔اپنے ایک انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ مغلوں اور انگریزوں کے دور سے حکمرانی کرانے والے خاندان اب بھی بر سراقتدار ہیں۔سراج الحق نے کہا کہ اگر ملک میں حقیقی جمہوریت ہو اور عوام کو آزادانہ بنیاد پر ووٹ دینے کی جازت ملے تو جماعت اسلامی بھی اقتدار میں آسکتی ہے۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اگر جماعت اسلامی اسٹیبلشمنٹ کی اتحادی ہوتی تو پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ کی طرح ہمیں بھی اقتدار ملتا۔متحدہ قومی موومنٹ سے اتحاد کے سوال پر سراج الحق نے کہا کہ اگر ایم کیو ایم تشدد اور طاقت کی سیاست ترک کردے تو ان کے ساتھ چلنے کو بھی تیار ہیں۔لال مسجد اور مولانا عبدالعزیز کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ اگر انہوں نے کوئی جرم کیا ہے تو ضرور گرفتار کیا جائے اور قانون کے مطابق کارروائی کی جائے، اللہ کے گھر کو گرانے کی باتیں کرنا مناسب نہیں۔21 ویں آئینی ترمیم میں مخالفت کے حوالے سے سراج الحق نے کہا کہ ان کا مطالبہ تھا کہ دہشت گردی میں کسی قسم کی تفریق نہ کی جائے، اس لئے دہشت گرد خواہ کوئی بھی ہو اسے سزا دی جائے۔

مزید : صفحہ اول