خلیجی ممالک نے کیا ایسا کام کہ غیرملکیوں کو کر دیا پریشان

خلیجی ممالک نے کیا ایسا کام کہ غیرملکیوں کو کر دیا پریشان
خلیجی ممالک نے کیا ایسا کام کہ غیرملکیوں کو کر دیا پریشان

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) خلیج تعاون کونسل میں شامل چھ ممالک کی طرف سے صحت کے مسائل کے شکار غیر ملکیوں کے معائنے کے لئے استعمال کئے جانے والے سٹینڈرڈ ٹیسٹ کے نتیجہ میں ان ممالک کا رخ کرنے والے غیر صحت مند ملازمین میں سے 95فیصد لوگ داخلے کی اجازت سے محروم کردئیے گئے ہیں۔ اخبار ”عرب نیوز“ کے مطابق سعودی وزیر صحت احمد الخطیب کا کہنا ہے کہ خلیج تعاون کونسل ممالک اس سے پہلے صحت کے مسائل کے شکار افراد میں سے صرف 70فیصد کو اپنے ممالک میں داخل ہونے سے روک پارہے تھے۔

مزید پڑھیں:چین کا وہ ٹریفک جام جو 12دن تک جاری رہا

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ ابھی بھی یہ شرح دنیا میں پائی جانے والی عمومی شرح سے بہت کم ہے اور آنے والے دنوں میں اسے مزید بہتر بنانے کی کوشش کی جائے گی۔ وزیر صحت نے کہا کہ اس معیاری ٹیسٹ کی بنیاد پر ایک جامع ڈیٹا بیس بھی بنایا جائے گا جس میں خلیج تعاون کونسل ممالک میں ملازمت کی غرض سے آنے والے تمام افراد کا ریکارڈ رکھا جائے گا۔ انہوں نے اس ضمن میں تعاون کے لئے اپنے ہم منصب وزراءکا شکریہ بھی ادا کیا۔

مزید : انسانی حقوق