دبئی میں تنخواہ کاٹنے پر پر بنگلہ دیشی مزدورکا سپروائزرپر تشدد،تین ماہ قید

دبئی میں تنخواہ کاٹنے پر پر بنگلہ دیشی مزدورکا سپروائزرپر تشدد،تین ماہ قید

دبئی(این این آئی)دبئی میں ایک بنگلہ دیشی مزدور نے اپنی اجرت میں تین دن کی کٹوتی پر اپنے نگران پر لاٹھیاں برسا دی ہیں مگر اس کو یہ ہاتھ دکھانا بہت مہنگا پڑ گیا اور ایک عدالت نے اس کو تین ماہ قید کی سزا سنا کر جیل بھیج دیا ہے۔عرب ٹی وی کے مطابق اس 35 سالہ بنگلہ دیشی مزدور پر ا س کے سپر وائزر نے الزام عاید کیا تھا کہ وہ 28 جنوری کو اچانک کسی کو بتائے بغیر کام چھوڑ کر چلا گیا تھا۔ وہ بزنس بے پر ایک تعمیراتی جگہ پر مزدوری کررہا تھا۔اس مزدور کے اس طرح اچانک غائب ہونے پر اس کے خلاف نگران نے متعلقہ انتظامیہ کو شکایت کردی تھی ۔اس نگران نے پراسیکیوٹر کو بتایا کہ 30 جنوری کی صبح ساڑھے دس بجے کے قریب میں یہ دیکھ کر حیران رہ گیا کہ یہ مزدور ایک لاٹھی اٹھائے میری طرف بڑھتا چلا آرہا تھا ۔پہلے اس نے میری ٹانگ اور پھر میری کمر پر لاٹھیاں برسائیں۔میں نے اس سے خود کو بچانے کی کوشش کی تو اس دوران میں میرا دایاں ہاتھ زخمی ہوگیا۔اس بنگلہ دیشی مزدور نے اپنی اجرت میں کٹوتی کا پتا چلنے کے بعد اپنے نگران کو لاٹھی سے تشدد کا نشانہ بنایا تھا اور ایک اور مزدور نے مداخلت کرکے نگران کو مزدور سے چھڑا یا تھا۔طبی رپورٹ کے مطابق مجروح نگران درد میں مبتلا ہے اور اس کی انگلیاں بھی درست طریقے سے حرکت نہیں کررہی ہیں۔بنگلہ دیشی ملزم اپنی سزا کے خلاف اپیل دائر کرسکتا ہے۔

عدالت کے فیصلے کے مطابق تین ماہ کی قید پوری ہونے کے بعد اس مزدوردبئی سے بے دخل کرکے واپس اس کے ملک بھیج دیا جائے گا۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...