رکن بلوچستان اسمبلی میراظہار حسین کھوسہ گرفتار

رکن بلوچستان اسمبلی میراظہار حسین کھوسہ گرفتار

کوئٹہ(آن لائن)قومی احتساب بیورو بلوچستان نے محکمہ خوراک میں اربوں روپے کی مبینہ کرپشن کے کیس میں اہم پیش رفت کرتے ہوئے موجودہ رکن بلوچستان اسمبلی و سابق وزیر خوراک بلوچستا ن میر اظہار حسین کھوسہ کو گرفتار کر لیا، ابتدائی تحقیقات کے مطابق سابق وزیر خوراک نے بڑے پیمانے پر مالی کرپشن کرتے ہوئے قومی خزانے کو تقریبا 28 کروڑ کا نقصان پہنچایا، واضح رہے نیب بلوچستان نے عوام الناس کی شکایات کا نوٹس لیتے ہوئے مختلف ادوار میں گندم کی بوریوں میں اربوں روپے کی کرپشن میں سابق وزیر خوراک اسفندیار کاکڑ ، سابق سیکرٹری خوراک سمیت کئی دیگر اعلیٰ عہدے داروں کے خلاف سوا دو ارب کے تین ریفرنسز احتساب عدالت میں دائر کر رکھے ہیں ، جبکہ محکمہ خوراک میں مبینہ کرپشن کے متعدد دیگر کیسز کی تحقیقات بھی مختلف مراحل میں ہیں ۔ کوئٹہ گندم خرد برد کیس میں سابق وزیر خوراک میر اظہار حسین کھوسہ نے محکمانہ سفارشات کے بر خلاف بْری ساکھ کے حامل گریڈ 6 کے منظور نظر ملازم عنایت کو انچارج پی ار سی سینٹر سریاب تعینات کروایا ، اس دوران وزیر خوراک کی آشیرباد سے 65 ہزار گندم کی بوریاں غبن کر کے قومی خزانے کو تقریبا 28 کروڑ کا نقصان پہنچایا گیا۔ ملزم کو گرفتار کر کے نیب بلوچستان جیل منتقل کر دیا گیا ہے۔ کل احتساب عدالت پیش کرکے کیس میں مزید تحقیقات کے لئے جسمانی ریمانڈ لیا جائیگا،اہم ملزمان کی گرفتاریاں جلد متوقع ہیں ۔

میر اظہار حسین کھوسہ گرفتار

مزید : علاقائی