بختاور بھٹو کا سیدہ عابدہ حسین کو انکی کتاب پر ایک ارب روپے ہرجانے کاقانونی نوٹس

بختاور بھٹو کا سیدہ عابدہ حسین کو انکی کتاب پر ایک ارب روپے ہرجانے کاقانونی ...

اسلام آباد (صباح نیوز)بختاور بھٹو نے سیدہ عابدہ حسین کو اپنی کتاب "Special Star - Benazir Bhutto's Story" پر ایک ارب روپے ہرجانے کاقانونی نوٹس بھجوا دیا ہے ۔نوٹس میں واضح کیا گیا کہ یہ کتاب اس جھوٹے دعوے سے شروع کی گئی ہے کہ اسکی مصنفہ شہید محترمہ بینظیر بھٹو کی دوست تھیں جو کہ قطعی غلط ہے اور عوام کو گمراہ کرنے کی کوشش ہے ۔ نوٹس سینئر سابق وفاقی وزیر قانون فاروق ایچ نائیک نے بھیجا ہے۔ پیپلز سیکرٹریٹ سے جاری بیان کے مطابق یہ نوٹس کتاب کی پبلشر ڈائریکٹر ، پرنٹرز اور کراچی لیٹریری فیسٹیول کی ڈائریکٹر ، ریجنل سیلز ڈائریکٹر ساؤتھ اور کراچی لیٹریری فیسٹیول کے بانی کو بھجوائے گئے ہیں ۔ پیپلز پارٹی کے مطابق عابدہ حسین اور دیگر کو یہ نوٹسز اس کتاب میں جھوٹے، غیرمصدقہ اور ذاتی عناد کی بنیاد پر لگائے گئے الزامات پر بھیجا گیا۔ نوٹس میں کہا گیا ہے کہ ان سب لوگوں نے غیرذمہ دارانہ اور بدنیتی پر مبنی تحریر لکھی اور شائع کی ہے جس میں یہ کوشش کی گئی کہ شہید محترمہ بینظیر بھٹو، ان کی سیاسی پارٹی اور سیاست پر کیچڑ اچھالا جائے۔ یہ تحریر بغیر کسی تحقیق کے لکھی گئی ہے اور یہ شہید محترمہ بینظیر بھٹو اور ان کے خاندان کے خلاف ہے۔ اس تحریر کو لکھتے وقت کسی قسم کی تصدیق نہیں کی گئی اور حقائق جاننے کی کوشش بھی نہیں کی گئی۔ اس کتاب کے پرنٹر اور پبلشرنے بھی اس بات کا قطعی خیال نہیں رکھا کہ وہ اسے مارکیٹ میں لاتے وقت اس میں دئیے گئے مواد کی تحقیق کر لیتے اس لئے ذہنی تکلیف، ہراساں کرنے اور ہتک عزت کیلئے ایک ارب روپے ہرجانے کا دعویٰ کیا جارہا ہے۔انہوں نے اس وقت یہ بیانات دئیے ہیں جب شہید محترمہ بینظیر بھٹو اس کا جواب دینے کے لئے اس دنیا میں نہیں ہیں۔ اگر وہ زندہ ہوتیں تو مصنفہ سے دوستی کے جھوٹے دعوے کا پردہ خود ہی چاک کر دیتیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ کتاب ایک بیمار ذہن اور روح کی پیداوار ہے جسے چیلنج کر دیا گیا ہے۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...