ڈی ایچ کیو ہسپتال چکوال کی نرسیں ایڈمن آفیسر کیخلاف سراپا احتجاج بن گئیں

ڈی ایچ کیو ہسپتال چکوال کی نرسیں ایڈمن آفیسر کیخلاف سراپا احتجاج بن گئیں

چکوال(ڈسٹرکٹ رپورٹر) ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال چکوال کی نرسیں ہسپتال کے ایڈمن آفیسر کیخلاف سراپا احتجاج بن گئیں اور اس کو فوری طور پر یہاں سے تبدیل کرنے کا مطالبہ کر دیا۔ منگل کے روز ہسپتال کی تمام نرسوں نے ایڈمن آفیسر کیخلاف سخت نعرہ بازی کی ۔ وہ ایڈمن آفیسر محمد خلیل جو ایک خاتون سیکورٹی گارڈ کو بہلا پھسلا کر رات کو ڈاکٹر کے کمرے میں لے گیا تھا اور رنگے ہاتھوں پکڑا گیا تھا کو فوری طور پر تبدیل کرنے کا مطالبہ کیا۔ سینئر ڈاکٹر اعظم سمور اور ڈپٹی میڈیکل سپرنٹندنٹ ڈاکٹر انجم قدیر نے نرسوں کو یقین دہانی کروائی کے مذکورہ ایڈمن افسر کیخلاف انکوائری شروع کر دی گئی ہے البتہ اب نئے بندوبست کے تحت مذکورہ ایڈمن افسر ہمارے ماتحت نہیں بلکہ ہم اس کے ماتحت ہیں۔ نرسوں نے اخبارات میں زیر تربیت نرس کیساتھ رنگ رلیاں مناتے پکڑے جانے والے ایڈمن افسر کے حوالے سے شائع ہونے والی خبروں پر بھی احتجاج کیا کہ نرس کا نام خواہ مخواہ شامل کیا گیا ہے حالانکہ کے پکڑی جانے والی خاتون نرس نہیں تھی۔ نرسوں نے دیگر سٹاف کے یونیفارم کو بھی تبدیل کرنے کا مطالبہ کیا تاکہ خواتین نرسوں اور دیگر خواتین سٹاف کے درمیان فرق واضح ہوسکے۔ اس یقین دہانی پر کے ایڈمن آفیسر کو معطل کر دیا گیا ہے خواتین نرسوں نے احتجاج ختم کر دیا اور اپنے مطالبے کو دوہرایا کہ مذکورہ شخص کو تبدیل نہ کیا گیا تو پھر احتجاج کا دائرہ وسیع کردیا جائے گا۔

مزید : کراچی صفحہ اول