لکی مروت ،جرگہ نے عاصمہ کے قاتل کی گرفتاری کیلئے28 فروری کی ڈیڈ لائن دیدی

لکی مروت ،جرگہ نے عاصمہ کے قاتل کی گرفتاری کیلئے28 فروری کی ڈیڈ لائن دیدی

کوہاٹ/لکی مروت(این این آئی) ضلع کوہاٹ میں قتل ہونے والی میڈیکل کی طالبہ عاصمہ رانی کے قتل کے خلاف مروت قبیلہ کا گرینڈ جرگہ منعقد ہوا جہاں حکومت کو قاتل کے فرار کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے 28 فروری تک ملزم کی گرفتاری کی ڈیڈ لائن دی گئی۔میڈیا رپورٹ کے مطابق لکی مروت میں جرگے کا اہتمام ناصر کمال خان نے مینا خیل ہاؤس میں کیا تھا۔مروت قبیلے کے جر گے میں سینکڑوں کی تعداد میں قومی مشران اور عوام نے شرکت کی۔جرگے میں کہا گیا کہ عاصمہ رانی مروت قوم کی بیٹی ہے ان کا قتل قوم کا قتل اور ان کا بدلہ قوم کا بدلہ ہے۔مروت قبیلے کے جرگے میں واضح کیا گیا کہ ہماری جنگ آفریدی قوم کے ساتھ نہیں تاہم قاتل کا فرار حکومت کی نا کامی ہے۔مقررین نے کہا کہ قاتل کی گرفتاری کے لیے حکومت کو 28 فروی تک ڈیڈ لائن دے رہے ہیں جس کے بعد انڈس ہائی وے کو بند کر دیں گے۔جرگے میں صحافی غلام اکبر مروت پر قاتلانہ حملے کی بھی شدید مذمت کی گئی۔یاد رہے کہ ایبٹ آباد میڈیکل کالج کی تھرڈ ائر کی طالبہ عاصمہ کو 27 جنوری کو کوہاٹ میں اس وقت قتل کردیا گیا تھا جب وہ چھٹیوں پر اپنے گھر آئی تھیں۔پولیس کی جانب سے گرفتاری سے قبل ہی مرکزی مبینہ ملزم مجاہد آفریدی سعودی عرب فرار ہوگئے تھے تاہم ان کے بھائی صدیق اللہ آفریدی کو گرفتار کیا گیا تھا۔پولیس نے 3 فروری کو مرکزی ملزم کے سہولت کار کو بھی گرفتار کرلیا تھا۔

جرگہ

مزید : کراچی صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...