چارسدہ میں غیر معیاری چپس ، کولڈ ڈرنکس اور چورن پر پابندی عائد

چارسدہ میں غیر معیاری چپس ، کولڈ ڈرنکس اور چورن پر پابندی عائد

چارسدہ (بیورو رپورٹ) چارسدہ میں غیر معیاری چپس ، کولڈڈرنکس اور چورن پر پابندی عائد ۔ ڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولر نے کارخانہ دارو، ہول سیلرز اور پر چون فروشوں کو تین ہفتے کے اندر سٹاک ختم یا واپس کرنے کا حکم جاری کر دیا ۔ متحدہ شاپ شاپ کیپرز فیڈریشن غیر معیاری اور مضر صحت اشیائے خور د و نوش کے خرید و فروخت میں بھر پور معاونت کریگی ۔ صدر حکیم اللہ فوجی ۔ تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولر کے دفتر میں چپس ، کولڈ ڈرنکس ، چور ن اور دیگر مضر صحت اشیائے خورد و نوش کے حوالے سے ایک غیر معمولی اجلاس زیر صدارت ڈی ایف سی محمد ارشد منعقد ہوا۔ اجلاس میں اے ایف سی عبدالحفیظ ، فوڈ انسپکٹر شیر گل ، اقبال حسین ، متحدہ شاپ کیپرز فیڈریشن کے مرکزی صدر حکیم اللہ فوجی اور ہو ل سیلرز جمال شاہ ، ارشد ، جلال ، احمد شاہ ، جاوید خان ، حبیب اللہ ، انیس احمد ، آفتاب احمد ، ذیشان اللہ ، شاکر اللہ ، ولایت اور دیگر تاجروں نے شرکت کی ۔ اجلاس میں ڈی ایف سی محمد ارشد نے تاجروں کو صوبائی حکومت کی طرف سے غیر معیار ی اشیائے خورد و نوش بالحصوص غیر معیاری چپس ، کولڈ ڈرنکس اور چورن کی خرید و فروخت کے حوالے سے پالیسی اور حکم نامے سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ غیر معیاری چپس ، کولڈ ڈرنکس اور چور ن سمیت دیگر غیر معیار ی اشیائے خورد و نوش کی وجہ سے بچوں میں پیچیدہ بیماریاں پھیل رہی ہے جس کا تدارک انتہائی ضروری ہو چکا ہے ۔ اس موقع پر ڈی ایف سی نے تاجروں پر واضح کیا کہ 3ہفتے کے اندر اندر ہر قسم کے غیر معیاری چپس اور دیگر اشیائے خورد و نوش کا سٹاک واپس کریں بصورت دیگر مقررہ تاریخ کے بعد کریک ڈاؤن شروع کیا جائیگا جس میں بھاری جرمانے اور جیل کی سزائیں شامل ہیں۔ اس موقع پر متحدہ شاپ کیپرز فیڈریشن کے مرکزی صدر حکیم اللہ فوجی نے اس حوالے سے ضلعی انتظامیہ اور محکمہ فوڈ سے مکمل تعاون کا یقین دلایا ۔ انہوں نے بھی تاجروں پر زور دیا کہ غیر معیار ی اشیائے خورد و نوش کا سٹاک فوری طور پر کمپنیوں کو واپس کریں ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر