صوبائی حکومت اسماء کیس کو دبانے کیلئے بچی کے خاندان پر دباؤ ڈال رہی ہے : ہارون بلور

صوبائی حکومت اسماء کیس کو دبانے کیلئے بچی کے خاندان پر دباؤ ڈال رہی ہے : ...

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی ترجمان ہارون بشیر بلور نے صوبائی حکومت کی جانب سے مردان کی ننھی اسماء کے کیس کو دبانے کیلئے بچی کے خاندان پر دباؤ ڈالنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اس فعل کو قابل افسوس قرار دیا ہے ، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا ہے کہ آئی جی پی خیبر پختونخوااپنی پریس کانفرنس میں اس بات کا اقرار کیا تھا کہ بچی کے ساتھ ظلم اور زیادتی ہوئی ہے،جبکہ دوسری جانب حکومت نے خود نمومے فرانزک ٹیسٹ کیلءئے پنجاب بھیجے جس میں حقیقت سامنے آ چکی ہے اور ملزم کا تعین کر لیا گیا ہے، انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی والے کیس کا رخ موڑنے کیلئے بچی کے خاندان پر دباؤ ڈال رہے ہیں اور اس اہم نو عیت کے مسئلے پر اے این پی کے خلاف الزامات لگا رہے ہیں ، ہارون بشیر بلور نے واضح کیا کہ اے این پی واقعے پر پوائنٹ سکورنگ کی بجائے مظلوموں کا ساتھ دیتی ہے اور ہمیشہ ظالموں کے خلاف ڈٹی رہی ، انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی ممبران جلوس نکال کر واقعے کی تحقیقات کو نقصان پہنچانا چاہتے ہیں تاہم عوام حقیقت سے آگاہ ہیں ، انہوں نے کہا کہ پوائنٹ سکورنگ در حقیقت حکومتی ممبران کر رہے ہیں اور حکومت کا یہ عمل قابل افسوس ہے، ، انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت کا ترجمان بھی ظالموں کا ساتھ دے کر مظلوموں کو دبانے کی کوشش کر رہا ہے جس سے یہ بات ثابت ہوتی ہے کہ آج تک اس قسم کے ہونے والے تمام واقعات میں پی ٹی آئی کے اپنے ارکان ملوث ہیں ، انہوں نے کہا کہ مردان میں ضلع ناظم کے خلاف مہم بھی اسی سلسلے کی کڑی ہے کیونکہ حمایت اللہ مایار مظلوموں اور غریب عوام کے ساتھ کھڑے ہیں،ترجمان نے کہا کہ ضلع ناظم اپنے فرائض ایمانداری سے ادا کر رہے ہیں اور یہی بات حکومت کی آنکھ میں کھٹک رہی ہے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ جو بھی درندگی کے اس واقعے میں ملوث ہے اسے کڑی سزا دی جائے تاکہ مستقبل میں ایسے واقعات سے محفوظ رہا جا سکے

مزید : پشاورصفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...