نوازشریف نے آزادکشمیر میں بھی مودی کیخلاف کوئی بات نہ کی،چوہدری یٰسین

نوازشریف نے آزادکشمیر میں بھی مودی کیخلاف کوئی بات نہ کی،چوہدری یٰسین

مظفرآباد(بیورورپورٹ)آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چوہدری محمد یاسین نے کہا ہے کہ میاں نواز شریف کا آزاد کشمیر کی سرزمین پر بھی مودی کے خلاف کوئی بات نہ کرنا اس بات کا ثبوت ہے کہ اسکو کشمیر یوں کے ساتھ کوئی ہمدردی نہیں ،یہ کل بھی مودی کا یار تھا اور آج بھی مودی کا یار ہے ،نواز شریف نے ہمیشہ کشمیر یوں کے خون کا سودہ کر کے اپنے اقتدار کو دوام بخشا ہے، اسکو کرسی چاہیے اسی وجہ سے وہ آزاد کشمیر کی وزارت عظمیٰ کا عہدہ مانگ رہاہے۔قانون ساز اسمبلی میں ختم نبوت بل کا پیش ہونا پوری اسمبلی اور ،کشمیری عوام کے لئے باعث سعادت ہے ، ختم نبوت ہمارے ایمان کا حصہ ہے جس کے لئے ہماری جان،مال ،اولاد سمیت سب کچھ حاضر ہے ہم اس بل کی مکمل حمایت کرتے ہیں اور اس کو آپنے لیے اعزاز سمجھتے ہیں۔وہ آج یہاں قانون ساز اسمبلی کے اجلاس میں اظہار خیال کررہے تھے ۔نہوں نے کہا کہ نواز شریف نے اپنے دور اقتدار میں بھی مودی کے خلاف کوئی بات نہیں کی اور آج بھی مودی کے خلاف کوئی بات نہیں کی نواز مودی گٹھ جوڑ کی وجہ سے مودی نے مقبوضہ کشمیر میں کٹھ پتلی حکومت بنوائی اور نواز شریف نے بھی آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان میں بھی عومی مینڈیٹ چرا کر من پسند حکومتیں قائم کروائیں تاکہ تقسیم کشمیر کی راہ ہموار ہو سکے اس کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ پیپلزپارٹی ہی بنی۔ انہوں نے چیلنج کیا کہ آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان میں کسی بھی نشست پر ضمنی انتخابات کرواہے جائیں تو جعلی مینڈیٹ کا پول کھل جائے گا پیپلزپارٹی آزاد کشمیر میں ھونے والے ضمنی اور بلدیاتی انتخابات میں بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کر یگی۔ انہوں نے کہا کہ آزاد کشمیر کے وزیراعظم نے جس طرح نواز شریف کی خوشنودی کے لیے جس طرح کسی دوسرے ملک سے الحاق کرنے کا اعلان کر کے اپنے حلف کو توڑ آ تھا اسی طرح اب وہ نواز شریف کی خوشنودی کے لئے وہ آزاد کشمیر کی وزارت عظمی کا عہدہ بھی کسی غیر ریاستی باشندے اور نواز شریف کے کسی ذاتی ملازم کو دینے کو تیار ہے انہوں نے کہا کہ تقسیم کشمیر کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ پیپلزپارٹی ہی ہے پیپلزپارٹی کا قیام بھی مسئلہ کشمیر پر تھا اور تقسیم کشمیر کی تمام تر سازشوں کو بھی پیپلزپارٹی نے ہی ناکام بنایا ذوالفقار علی بھٹو شہید کے نظریات پر عمل پیرا ہیں کشمیر پر ایک ہزار سال تک جنگ لڑیں گے اور آج بھی پیپلزپارٹی اسی نعرے کا تسلسل کشمیر لیں گے اور پورے کا پورا لیں گے پر قائم ہے انہوں نے کہا کہ آزاد کشمیر کی حکومت مکمل طور پر ناکام ھو چکی ہے اکلاس ملازمین ڈاکٹرز پیرا میڈیکل سمیت ملازمین ھڑتالوں پر ہیں حکومتی پہیہ جام ہو چکا ہے آٹھمقام تاؤبٹ روڈ جیسے سڑکوں کے منصوبے ڈراپ کر دیئے گئے ہیں۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر