لاہور میں دہشتگردی کا خطرہ، اہم شخصیات، عمارتوں کو نشانہ بنایا جاسکتا ہے، الرٹ جاری

لاہور میں دہشتگردی کا خطرہ، اہم شخصیات، عمارتوں کو نشانہ بنایا جاسکتا ہے، ...
لاہور میں دہشتگردی کا خطرہ، اہم شخصیات، عمارتوں کو نشانہ بنایا جاسکتا ہے، الرٹ جاری

لاہور (ویب ڈیسک) صوبائی دارالحکومت میں دہشتگردی کی کارروائیوں کے خدشے کے پیش نظر الرٹ جاری کردیا گیا ہے۔ روزنامہ خبریں کے مطابق حساس اداروں نے دہشتگردی کی کارروائیوں کے حوالے سے تھریٹ الرٹ جاری کیا ہے جس میں کہا گیا کہ دہشتگرد وی وی آئی پی شخصیات سمیت سکول، کالجز، یونیورسٹیوں سمیت شاپنگ مالز کو بھی نشانہ بناسکتے ہیں۔

تھریٹ الرٹ جاری ہونے کے بعد آئی جی پنجاب کیپٹن (ر) عارف نواز نے سی سی پی او لاہور کیپٹن (ر) امین وینس اور ڈی آئی جی آپریشن ڈاکٹر حیدر اشرف کو سکیورٹی فول پروف بنانے کے احکامات جاری کردئیے۔ آئی جی آفس کی جانب سے جاری ہونے والے مراسلے میں بتایا گیا کہ این ڈی ایس (نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سکیورٹی)پاکستان کے دیگر علاقوں سمیت لاہور میں دہشتگردی کی کارروائیوں کی منصوبہ بندی کررہی ہے ۔

دہشتگردی کی کارروائیوں کے خدشے کے پیشنظر پولیس افسران کو سکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کا حکم دیا گیا ہے اور ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ سکول، کالجز اور یونیورسٹیوں سمیت شاپنگ مالز، اہم مساجد، چرچز اور دیگر اہم عمارتوں کے اردگرد سرچ آپریشن کا سلسلہ جاری رکھیں۔ اس ضمن میں تمام ڈویژنل ایس پیز کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اپنے اپنے علاقہ جات میں روزانہ کی بنیاد پر شہریوں کا سرچ آپریشن بائیومیٹرک مشینوں کی مدد سے کیا جائے جبکہ شہر کے داخلی اور خارجی راستوں پر بھی سکیورٹی ہائی الرٹ کردی گئی۔ ذرائع نے بتایا کہ مشکوک گاڑیوں کو چیکنگ کے بعد داخلے کی اجازت دی جارہی ہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...