کے پی ٹی میں غیرقانونی بھرتیوں کاریفرنس، بابر غوری ملزم نامزد

کے پی ٹی میں غیرقانونی بھرتیوں کاریفرنس، بابر غوری ملزم نامزد
کے پی ٹی میں غیرقانونی بھرتیوں کاریفرنس، بابر غوری ملزم نامزد

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) کے پی ٹی میں غیر قانونی بھرتیوں کے ریفرنس میں سابق وزیر اور متحدہ کے سابق رہنما بابر غوری ملزم نامزد کردیا گیا، چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے نیب سے استفسار کیا کہ ملزم تو نامزد کردیا گیا گرفتاری کیلئے کیا کارروائی کی؟

تفصیلات کے مطابق سندھ ہائیکورٹ میں کے پی ٹی میں غیر قانونی بھرتیاں کرنے سے متعلق کیس میں جی ایم کے پی ٹی رؤف اخترو دیگر کی درخواست ضمانت پر سماعت ہوئی،سماعت میں بابری غوری کو پی ٹی میں غیرقانونی بھرتیوں کے ریفرنس میں ملزم نامزد کردیا۔

چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے نیب سے استفسار کیا کہ ملزم نامزد کردیا گیا گرفتاری کیلئے کیا کارروائی کی؟کیا گھر پر چھاپہ مارا، کسی کو بلایا؟بڑی مچھلیوں کو جب تک نہیں پکڑوگے توکیسے کام ہوگا؟

تفتیشی افسر نے بتایا بابرغوری ملک سے باہر ہیں، عدالت نے نیب پراسیکیوٹر کی سرزنش کرتے ہوئے کہا باہر سے ملزمان کو کیسے لایاجاتا ہے یہ کیوں نہیں بتاتے۔

نیب پراسیکیوٹر نے بتایا روف اختر کو بابرغوری کی سفارش پر کے پی ٹی کا جنرل منیجر بنایا گیا، ایک ماہ کی مہلت دی جائے تو پیش رفت سے آگاہ کرسکیں گے،کے پی ٹی کے جی ایم رو¿ف اخترفاروقی کا کہنا تھا کہ انہیں ابھی تک اپنے خلاف الزامات کے بارے میں علم نہیں، نیب کو ہدایت کریں ،انکوائری یا ریفرنس کی نقل فراہم کرے۔

عدالت نے رؤف اخترسمیت دیگرملزمان کی عبوری ضمانت میں آٹھ مارچ تک توسیع کرکے سماعت ملتوی کردی۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی