نہال ہاشمی کی سزا کے خلاف انٹراکورٹ اپیل اعتراضات لگا کر واپس

نہال ہاشمی کی سزا کے خلاف انٹراکورٹ اپیل اعتراضات لگا کر واپس
نہال ہاشمی کی سزا کے خلاف انٹراکورٹ اپیل اعتراضات لگا کر واپس

اسلام آباد (ویب ڈیسک) مسلم لیگ ن کے رہنما نہال ہاشمی نے توہین عدالت کیس میں سزا کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں انٹرا کورٹ اپیل دائر کردی ہے جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ پیشے کے اعتبار سے وکیل ہوں، تقریر توہین عدالت کے زمرے میں نہیں آتی تھی، پھر بھی غیر مشروط معافی مانگی، جسے نظر انداز کرکے توہین عدالت کا مرتکب قرار دیا گیا۔ خود کو عدالت کے رحم و کرم پر چھوڑا، ان حالات میں عدالت کو ان کے ساتھ ہمدردی کرنی چاہیے تھی۔ ریکارڈ پر کوئی ایسے شواہد نہیں جس سے نہال ہاشمی کا توہین عدالت سے تعلق ثابت ہو۔ سپریم کورٹ سے استدعا ہے کہ سزا کا فیصلہ کالعدم قرار دے جبکہ رجسٹرار آفس سے نہال ہاشمی کی انٹراکورٹ اپیل اعتراضات لگا کر واپس کردی۔ اعتراضات میں کہا گیا ہے کہ عدالتی فیصلے کی تصدیق شدہ نقل ساتھ لگائی جائے اور وکالت نامہ جیل حکام سے تصدیق شدہ ہو۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...