12 سالہ لڑکی کے سامنے خود لذتی کرنے والے مجرم کو جیل میں ڈال دیا گیا

12 سالہ لڑکی کے سامنے خود لذتی کرنے والے مجرم کو جیل میں ڈال دیا گیا
12 سالہ لڑکی کے سامنے خود لذتی کرنے والے مجرم کو جیل میں ڈال دیا گیا

  

مانچسٹر (ڈیلی پاکستان آن لائن) برطانوی شہر مانچسٹر کی کراﺅن کورٹ نے 12 سالہ لڑکی کے سامنے خود لذتی کرنے والے 28 سالہ نوجوان کو ڈھائی برس قید کی سزا سنادی۔

برطانوی اخبار دی مرر کے مطابق مانچسٹر کے علاقے کاسل فیلڈ سے تعلق رکھنے والے 28 سالہ کارل ہڈسن کی 12 سالہ لڑکی سے ایک ڈیٹنگ ایپ کے ذریعے ملاقات ہوئی۔ 12 سالہ لڑکی نے ویب سائٹ پر غلط معلومات فراہم کر رکھی تھیں اور خود کو 19 سال کا ظاہر کیا تھا۔

کارل ہڈسن لڑکی کو اپنے فلیٹ پر لے گیا جہاں دونوں نے رات ایک ساتھ گزاری لیکن اس دوران جسمانی تعلق قائم نہیں کیا۔ ہڈسن نے لڑکی کے سامنے خود لذتی کی اور اس کی ایک مختصر ویڈیو اور 2 تصاویر بنائیں۔ اس نے یہ تصاویر اپنے دوستوں کے ساتھ بھی شیئر کیں۔

معاملہ سامنے آنے پر اسے عدالت میں پیش کیا گیا جہاں سے اسے ڈھائی برس قید کی سزا سنادی گئی ہے۔ کارل ہڈسن کو کراﺅن کورٹ نے 13 سال سے کم عمر بچی کو جنسی سرگرمی میں ملوث کرنے، ایک بچے کی موجودگی میں جنسی سرگرمی کرنے ، بچے کی غیر اخلاقی تصویر بنانے اور اسے پھیلانے کے الزامات کے تحت سزا سنائی گئی ہے۔ عدالت نے حکم دیا ہے کہ مجرم آئندہ ساری زندگی جنسی مجرموں کے رجسٹر میں حاضری بھی لگوایا کرے گا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /انسانی حقوق /برطانیہ