ہے کوثری خاک نشیں عاشقِ احمدؐ

ہے کوثری خاک نشیں عاشقِ احمدؐ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

چودھری دِلّو رام کو ثری

اُمید میں رکھتا ہوں جنابِ احدی سے
اُلفت ہے محمدؐ سے محبت ہے علیؓ سے
کیا دشمن گمراہ کی ہے اصل و حقیقت
زنہار میں ڈرتا ہوں شیطان ِ قوی سے
طِفلی سے فدا نا م محمدؐ پہ ہو ا ہوں
اسلام پہ شیدا ہو ں میں سو جا ن سے جی سے
ہر چند ہے اغیارکا مجمع بڑا بھاری
پر عاشقِ حضرتؐ نہیں ڈرتے کسی سے
مرنے کا مجھے خوف نہ جینے کی ہوس ہے
سر اپنا ہتھیلی پہ ہے کہ دو یہ شقی سے
کیوں دولت ِ دنیا کا تجھے زعم ہے غافل
کیوں ناز تو کرتا ہے کہ پر ہیں تیرے کسی سے
جو گزری زرو سیم سے قارونِ لعیں پر
گزرے گی وہی تجھ پہ ذرا پوچھ اسی سے
دل و دولت ِ اسلام سے بندہ کا غنی ہے
آسودہ میں کو نین میں ہوں نعتِ نبی ؐ سے
ہے کوثری خاک نشیں عاشقِ احمدؐ
مطلق نہیں ہے ڈر اُسے گردوں کی کجی سے

مزید :

ایڈیشن 1 -