سپاٹ فکسنگ سکینڈل میں قید کی سزا، ناصر جمشید کی اہلیہ نے دل کا حال سنا دیا

سپاٹ فکسنگ سکینڈل میں قید کی سزا، ناصر جمشید کی اہلیہ نے دل کا حال سنا دیا
سپاٹ فکسنگ سکینڈل میں قید کی سزا، ناصر جمشید کی اہلیہ نے دل کا حال سنا دیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے اوپننگ بلے باز ناصر جمشید کو سپاٹ فکسنگ سکینڈل میں سزا سنائے جانے کے بعد ان کی اہلیہ کا کہنا ہے کہ یہ میری زندگی کامشکل ترین دن ہے۔
تفصیلات کے مطابق مانچسٹر کراﺅن کورٹ نے ناصر جمشید کو 17 مہینے، یوسف انور کو ساڑھے تین سال اور اعجاز احمد کو ڈھائی سال قید کی سزا سنائی ہے۔ عدالت کی جانب سے سزا سنائے جانے کے بعد تینوں ملزموں کو کمرہ عدالت سے گرفتار کر کے پولیس وین کے ذریعے جیل منتقل کر دیا گیا ہے۔
نجی ٹی وی جیو نیوز کے مطابق مانچسٹر کراﺅن کورٹ کی جانب سے سزا سنائے جانے کے بعد ناصر جمشید کی اہلیہ نے اسے اپنی زندگی کا مشکل ترین دن قرار دیتے ہوئے کہا کہ امید ہے کہ ناصر کی سزا سے دوسرے سبق سیکھیں گے اور میری دعا ہے کہ گزشتہ تین برس سے ہم جس تکلیف میں تھے اس سے کوئی اور نہ گزرے۔
واضح رہے کہ لندن کی نیشنل کرائم ایجنسی کی تحقیقات کے دوران ناصر جمشید کو سپاٹ فکسنگ کیس میں گرفتار کیا تھا۔ مذکورہ گروپ نے بنگلہ دیش پریمیر لیگ 2016ءاور پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) 2017ء”طے“ کرنے کی کوشش کی تھی اور اس مقصد کیلئے اوپننگ بیٹسمین کو رقم کے عوض اوور کی پہلی دو گیندوں پر رن نہ بنانے پر راضی کیا گیا تھا۔

مزید :

کھیل -