اوپن بیلٹ،صدارتی آرڈیننس جاری،الیکشن ایکٹ 2017ء کی شق 122,81اور 185میں ترمیم سپریم کورٹ میں زیر سماعت صدارتی ریفرنس کے فیصلے سے مشروط

  اوپن بیلٹ،صدارتی آرڈیننس جاری،الیکشن ایکٹ 2017ء کی شق 122,81اور 185میں ترمیم ...

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں (سینیٹ انتخابات اوپن بیلٹ کے ذریعے کرانے کیلئے صدارتی آرڈیننس جاری کردیا گیا۔آرڈیننس کو سپریم کورٹ میں اس حوالے سے دائر صدارتی ریفرنس پر عدالت عظمیٰ کی رائے سے مشروط کیا گیا ہے۔صدر مملکت نے الیکشنز ترمیمی آرڈیننس 2021 پر دستخط کر دیے، الیکشن ایکٹ 2017 کی شق 81، 122 اور  185 میں ترمیم شامل کی گئی ہے۔ آرڈیننس کے مطابق سپریم کورٹ سے سینیٹ الیکشن آئین کی شق 226 کے مطابق رائے ہوئی تو سیکرٹ ووٹنگ ہوگی، سپریم کورٹ نے اگر سینیٹ الیکشن کو الیکشن ایکٹ کے تحت قرار دیا تو اوپن ووٹنگ ہوگی۔آرڈیننس کے مطابق اوپن ووٹنگ کی صورت میں سیاسی جماعت کا سربراہ یا نمائندہ ووٹ دیکھنے کی درخواست کرسکے گا، آرڈیننس کوالیکشنز ترمیمی آرڈیننس 2021 کا نام دیا دیا گیا ہے، صدارتی آرڈیننس کا اطلاق ملک بھر کیلئے صرف ایک بار ووٹنگ پر ہوگا۔پاکستان کے اٹارنی جنرل خالد جاوید خان نے بی بی سی کے اعظم خان کو بتایا یہ ایک مشروط آرڈیننس ہے جس کا تعلق سپریم کورٹ کے فیصلے کی تشریح سے ہے، اگر سپریم کورٹ نے قرار دیا کہ یہ انتخابات اوپن بیلٹ سے ہو سکتے ہیں تو پھر اس آرڈیننس کا اطلاق ہو گا ورنہ سپریم کورٹ کی رائے کے مطابق ہی خفیہ انتخابات ہوں گے۔اٹارنی جنرل کے مطابق ان کی رائے میں صدارتی ریفرنس جاری کرنے میں کوئی قانونی قباحت نہیں برتی گئی۔ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا پارلیمان میں بل کا مقصد آئین میں ترمیم متعارف کرانا تھا جبکہ آرڈیننس کا مقصد صرف ایک عمل کی تشریح سے ہے۔ الیکشن کمیشن کی رائے اوپن بیلٹنگ کیخلاف ہے مگر حکومت سپریم کورٹ کی رائے پر عمل کرے گی۔جب ان سے پوچھا گیا سپر یم کورٹ کے فیصلے کا انتظار کیوں نہیں کیا گیا تو ان کا جواب تھا حکومت نے یہ وضاحت اس آرڈیننس میں ہی کر دی ہے کہ اس کی قسمت کا فیصلہ عدالتی رائے سے جڑا ہوا ہے اس سے قبل وفاقی کابینہ نے سینیٹ الیکشن اوپن بیلٹ سے کرانے کیلئے آرڈیننس کی منظوری دی، وفاقی کابینہ نے آرڈیننس کی منظوری سرکولیشن سمری کے ذریعے دی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کو بریفنگ میں بتایا گیا سینیٹ انتخابات کاکیس سپریم کورٹ میں بھی زیرسماعت ہے اور سینیٹ الیکشن کا شیڈول11 فروری کو جاری ہوگا۔

صدارتی آردیننس

مزید :

صفحہ اول -