بھارتی کسانوں کا آج ملک گیر پہیہ جام کا اعلان،40لاکھ ٹرکٹرز کی ریلی کو روکنے کیلئے دہلی بارڈر پر 50ہزار اہلکار تعینات

  بھارتی کسانوں کا آج ملک گیر پہیہ جام کا اعلان،40لاکھ ٹرکٹرز کی ریلی کو ...

  

 نئی دہلی (این این آئی)بھارت میں زرعی قوانین کے خلاف کسانوں نے (آج) اتوار کو ملک گیر روڈ بلاک کرنے کا اعلان کردیا۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارت میں زرعی قوانین کے خلاف کسانوں نے 3 گھنٹے کیلئے ملک بھرکی سڑکیں اور ہائی وے بلاک کرنے کا اعلان کیا ہے۔بھارتی میڈیا کے مطابق کسانوں کی پہیہ جام ہڑتال دہلی، اترکھنڈ اور اترپردیش میں نہیں ہوگی، پولیس نے دہلی بارڈر کے اطراف سیکیورٹی میں اضافہ کردیا۔دہلی بارڈر پر 50 ہزار سیکیورٹی اہلکار تعینات ہیں جبکہ سرحدی راستوں کی ڈرونز سے نگرانی کی جارہی ہے۔ اس کے علاوہ شہر کے نو میٹرو اسٹیشنز میں آنے جانے پر پابندی لگادی گئی ہے۔بھارتی میڈیا کے مطابق بھارت سرکار نے کسانوں کو آگے بڑھنے سے روکنے کیلئے سیمنٹ کی بڑی رکاوٹیں اور سڑکوں پر کیلیں بکھیر رکھی ہیں، جس کے جواب میں کسان لیڈر راکیش ٹکیٹ نے رکاوٹوں کے سامنے پھول اگا دئیے ہیں،اترپردیش بارڈر پر واقع غازی پور بارڈر پر کسانوں کے احتجاج نے دنیا بھر کی توجہ حاصل کرلی ہے،بھارتی کسانوں نے آج ملک بھر میں پہیہ جام کر رکھا ہے اور 40 لاکھ سے زائد ٹریکٹر بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کے خلاف ریلی نکالیں گے۔دوسری جانب مودی سرکار نے نئی دہلی کو چھاؤنی میں بدل دیا۔ سڑکوں پر کیل اور نوکیلے تار نصب کر دیے جبکہ ریاست ہریانہ میں انٹرنیٹ سروسز معطل کر دی گئی۔

بھارتی کسان

مزید :

صفحہ اول -