ناکام پالیسیوں سے ادارے تباہ ہورہے ہیں،جاوید قصوری

  ناکام پالیسیوں سے ادارے تباہ ہورہے ہیں،جاوید قصوری

  

لاہور (نمائندہ خصوصی)امیر جماعت اسلامی پنجاب وسطی محمد جاوید قصوری نے کہا ہے کہ حکمرانوں کی ناکام معاشی پالیسیوں کی بدولت ادارے تباہ اور عوامی مشکلات میں اضافہ ہورہا ہے۔ اورنج لائن ٹرین منصوبہ بھی قومی خزانے پر بوجھ بنتا جارہا ہے۔ بجلی کا خرچہ حاصل ہونے والی کل آمدن سے بھی 7کروڑ روپے زائد ہے۔ 

اہم منصوبے کو حقیق معنوں میں فلاحی بنانے کے لیے کرایوں میں کمی کی جائے تاکہ زیادہ سے زیادہ لوگ اس منصوبے سے مستفید ہوسکیں۔ ان خیالات کا اظہارانہوں نے گزشتہ روز منصورہ میں مختلف عوامی وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ کراچی اور لاہور جیسے بڑے شہروں کے لیے جدید ٹرانسپورٹ سسٹم کی اشد ضرورت ہے مگر بد قسمتی سے حکام اس حوالے سے اورنج ٹرین منصوبے کا ٹارگٹ پورے نہیں کرسکے۔ حکومتوں کا کام ہوتا ہے کہ عوام کو تیز،صاف ستھری اور آرام دہ سفری سہولیات فراہم کریں مگر پاکستان میں الٹی گنگا بہتی ہے۔ بے ہنگم ٹریفک کے باعث عوامی مسائل میں اضافہ ہوتا چلا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ منصوبوں کی تکمیل کافی نہیں ہوتی بلکہ منصوبوں کو کامیاب بنانے کے حوالے سے پلاننگ کی بنیادی ضرورت ہوتی ہے تاکہ نظام کو اپنے پا?ں پر کھڑا کیا جاسکے۔ ایسے منصبوے جن کا بوجھ قومی خزانے پر پڑے عوام کی فلاح نہیں بلکہ خون چوسنے کے مترادف ہیں۔ محمد جاوید قصوری نے اس حوالے سے مزید کہا کہ موثر حکمت عملی بنا کر عوام کو ان منصوبوں کی جانب راغب کیا جائے۔ ترقی یافتہ ممالک میں متعلقہ ادارے مختلف قسم کے رعایتی پیکجز دے کر اپنی آمدن میں اضافہ کرتے ہیں۔ 

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -