نیو یارک،ریاستی اسمبلی مین 5فروری کو ”کشمیر امریکن ڈے“قرار دینے کی قرار دادمنظور

نیو یارک،ریاستی اسمبلی مین 5فروری کو ”کشمیر امریکن ڈے“قرار دینے کی قرار ...

  

 نیویارک(آئی این پی) نیویارک کی ریاستی اسمبلی میں 5فروری دو ہزار اکیس کا دن بطور ”کشمیر امریکن ڈے“منانے کی قراردار منظور کرلی گئی، ریاستی اسمبلی اور سینیٹ نے قرارداد کی متفقہ منظوری دے دی۔ قرارداد کے ذریعے بھارتی فوج کے مظالم اور کشمیریوں کیساتھ اظہار یکجہتی کرتے ہوئے ا نکے بنیادی حقوق کو تسلیم کرلیا گیا ہے۔ مظلوم کشمیریوں کی آواز امریکی ایوانوں تک پہنچانے میں پاکستان امریکا گروپ کی خصوصی کاوشیں شامل ہیں۔ عالمی میڈیا کے مطابق امریکی شہریوں نے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی اور 550روز سے جاری لاک ڈاؤن کیخلاف نیویارک میں ٹرکوں پر تشہیری مہم کا آغاز کردیا مقبوضہ کشمیر پر قابض بھارتی انتظامیہ کے لاک ڈاؤن کے 550روز مکمل ہوچکے ہیں، لاک ڈاؤن کیخلاف نیویارک کے شہریوں نے ٹرکوں پر تشہیری مہم شروع کردی۔ کشمیریوں پر ظلم و بربریت کیخلاف پیغامات ٹرکوں پر آویزاں کیے گئے اور ان ٹرکوں نے اقوام متحدہ سمیت امریکی محکمہ خارجہ کے دفتر کے باہر چکر لگاتے رہے،بھارتی ہائی کمیشن کی عمارت کے با ہر بھی ٹرک چکر لگاتے رہے، اس دوران ڈیجیٹل سکرین پر کشمیریوں پر جاری مظالم کی ویڈیوز اور تصاویر چلائی جاتی رہیں۔دوسری جانب ترجمان دفتر خارجہ زاہد حفیظ نے نیو یارک سٹیٹ اسمبلی میں یوم کشمیر امریکا منانے کی قرارداد کی منظوری کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ قرارداد یوم یکجہتی کشمیر پر منظور ی کی گئی جو کہ خوش آئند ہے،قرارداد کشمیریوں کے حوصلے کو سراہتی ہے اورکشمیریوں کی منفرد ثقافت اور مذہبی شناخت کو تسلیم کرتی ہے،قرارداد اس بات کا ثبوت ہے کہ بھارت کشمیری عوام کے انسانی حقوق کی مزید پامالی کو چھپا نہیں سکتا۔ 

نیویارک اسمبلی

مزید :

صفحہ اول -