سینیٹ انتخابات میں شفافیت ضروری ، صدارتی آرڈیننس کے حق میں بلوچستان سے بڑی آواز بلند ہو گئی

سینیٹ انتخابات میں شفافیت ضروری ، صدارتی آرڈیننس کے حق میں بلوچستان سے بڑی ...
سینیٹ انتخابات میں شفافیت ضروری ، صدارتی آرڈیننس کے حق میں بلوچستان سے بڑی آواز بلند ہو گئی

  

کوئٹہ(ڈیلی پاکستان آن لائن)ترجمان حکومت بلوچستان لیاقت شاہوانی نے کہا ہے کہ سینیٹ کے انتخابات میں شفافیت کیلئے ضروری ہے کہ یہ اوپن بیلٹ کے ذریعے منعقد ہوں،اپوزیشن کو بغضِ حکومت میں اس حوالے سے آرڈیننس کی مخالفت نہیں کرنی چاہئے۔

آفیسرز کلب کوئٹہ میں پر یس کا نفر نس کر تے ہوئے لیاقت شاہوانی نے کہاکہ بلو چستان میں شفافیت کو یقینی بنانے کیلئے اقدامات کئے جارہے ہیں، بلوچستان میں بدعنوانی کے خاتمے او ر شفا فیت کیلئے نیب کے ساتھ ایم او یو بھی سائن کیا گیا ہے۔ انھوں نے کہاکہ پی ڈی ایم کی جماعتیں روز بروز اپنے اقدامات کی وجہ سے غیرمقبول ہوتی جارہی ہیں، ان اسمبلیوں کو پی ڈی ایم کی جماعتو ں نے پہلے جعلی اسمبلیاں کہاتھا، اب انہی اسمبلیوں سے یہ سینیٹرز منتخب ہونے  جا رہے ہیں ۔

حکومت بلوچستان کے ترجمان نے کہاکہ پی ڈی ایم کی جماعتیں ہارس ٹریڈنگ کی حمایت کررہی ہیں، ہم اپنی کارکردگی کی بنیاد پر اچھاپرفارم کریں گے اور ووٹ لیں گے،سینیٹ انتخاب میں بلوچستان میں ہم پارٹی ڈسپلن کے تحت چلیں گے۔انھوں نے کہاکہ بلوچستان کے مکس مارشل آرٹس کھلاڑی نے پانچ فروری کو بھارتی کھلاڑی کو ہراکرکارنامہ انجام دیا ،احمد مجتبیٰ نے انٹرنیشنل مقابلے میں بلوچستان اور ملک کا نام روشن کیا،احمد مجتبیٰ کی کوئٹہ آمد پر شاندار استقبال کیاجائیگا۔

صوبائی ترجمان کا کہنا تھاکہ  کراچی میں پشین کےباکسر کی ایک مقابلےمیں ہلاکت کی تحقیقات ہونی چاہئے،گوادرکےکرکٹ سٹیڈیم کو دنیابھرنےسراہا ہے، گوادر کےسٹیڈیم کو مزیدبہتر کیاجائیگا،ہماری خواہش ہےکہ پی ایس ایل کا ایک میچ گوادرمیں ہو ،کرکٹ کے شو بز سٹار کو مدعو کر کے بھی ایک نمائشی میچ کا پروگرام ہے ،اگلے تین سالوں میں صوبے کے ہرضلع میں سپورٹس کمپلیکس بنائے جائیں گے ،بلوچستان میں سپیشل اکنامک زون کے منصوبے پر کام کیاجارہاہے ، بلوچستان میں ترقی کاسفر جاری و ساری رہیگا۔

مزید :

علاقائی -بلوچستان -کوئٹہ -