'سینیٹ الیکشن کے لیےحکمت عملی تبدیل کرنا پڑی' مولانا فضل الرحمان کا یوٹرن

'سینیٹ الیکشن کے لیےحکمت عملی تبدیل کرنا پڑی' مولانا فضل الرحمان کا یوٹرن
'سینیٹ الیکشن کے لیےحکمت عملی تبدیل کرنا پڑی' مولانا فضل الرحمان کا یوٹرن
سورس: File

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) اور جے یو آئی ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ روزانہ کی بنیاد پر حکمت عملی تبدیل کرنا پڑتی ہے، سینیٹ الیکشن کی حکمت عملی تبدیل کرنا پڑی ہے۔ 

مولانا فضل الرحمان نے کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیراعظم سے 31 جنوری تک مستعفی ہونے کا کہا تھا۔ استعفیٰ نہ آنے کی صورت میں لانگ مارچ کا فیصلہ کیا گیا ہے، لانگ مارچ سے پہلے کچھ کہنا قبل از وقت ہو گا، لانگ مارچ کے بعد دیکھیں گے کہ کیا صورتحال ہے۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ سینیٹ الیکشن کےحوالےسےحکومت عدالت گئی، ایسےموقع پرآرڈیننس بدنیتی پرمبنی ہے۔ ان کے لوگ ووٹ نہیں دینا چاہتے اس لیے شو آف ہینڈ کی بات ہورہی ہے۔ سینیٹ انتخابات کو مذاق بنا دیا گیا ہے اس پر ہم  خاموش نہیں بیٹھیں گے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم نے صرف پلان تبدیل کیا ہے موقف نہیں، پسپائی تب ہوتی ہے جب آپ اپنے موقف سے پیچھے ہٹ جاتے ہیں

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -سندھ -کراچی -