اسلام آباد چیمبر آف کامرس اور بحریہ یونیورسٹی کے درمیان باہمی سمجھوتہ

اسلام آباد چیمبر آف کامرس اور بحریہ یونیورسٹی کے درمیان باہمی سمجھوتہ

اسلام آباد (کامرس ڈیسک) اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری نے یونیورسٹیوں اور صنعتی شعبہ کے مابین قریبی روابط کو فروغ دینے اور ریسرچ سرگرمیوں میں تعاون بڑھانے کے لئے بحریہ یونیورسٹی کے ساتھ باہمی سمجھوتے کی ایک یاداشت پر دستخط کئے ۔ آئی سی سی آئی کے صدر شعبان خالد اور بحریہ یورنیورسٹی کے ریکٹر وائس ایڈمرل (ریٹائرڈ) شاہد اقبال ایچ آئی (ایم) نے سمجھوتے کی یاداشت پر دستخط کئے ہیں۔دونوں اداروں نے مختلف شعبوں میں مل کر کام کرنے پر تفاق کیا ہے جن میں بحریہ یونیورسٹی کے طلبا کو صنعتی شعبے میں انٹر شپ اور روزگار کے مواقع فراہم کرنا، مختلف شعبوں میں طلبا کی پیشہ وارانہ ترقی کیلئے مشترکہ طور پر شارٹ کورسس تیار کرنا اور باہمی کاوشوں سے جدید نصاب کو فروغ دینانمایاں ہیں۔اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر شعبان خالد نے کہا کہ ترقی یافتہ اقوام نے تعلیمی اداروں اور صنعتی شعبے کے مابین قریبی تعلقات کو فروغ دے کر شاندار ترقی حاصل کی ہے لہذا ہمیں بھی ان کے نقش قدم پر چلتے ہوئے یونیورسٹیوں اور صنعتی شعبے کے درمیان تعلقات کومستحکم کرنا ہو گا تا کہ مشترکہ کوششوں سے ملک کیلئے ویلیو ایڈڈ مصنوعات تیار کر کے تجارت و برآمدات کو فروغ دیا جا سکے۔انہوں نے کہا کہ طلبا، یونیورسٹیاں اور صنعتی شعبہ ملک کی معیشت کی ترقی کیلئے انجن کا کردار ادا کرتے ہیں لہذا ان کے مابین قریبی تعاون فروغ دے کر ملک مختلف شعبوں میں خود کفالت حاصل کر سکتا ہے۔انہوں نے طلبا کو اعلیٰ معیار کی تعلیم فراہم کرنے کیلئے بحریہ یونیورسٹی کی کوششوں کو سراہا اور اس امید کا اظہار کیا کہ اسلام آباد چیمبر آف کامرس اور بحریہ یونیورسٹی کے مابین باہمی تعاون کے سمجھوتے سے طلبا اور صنعتی شعبے کیلئے فائدہ مند نتائج برآمد ہوں گے۔بحریہ یونیورسٹی کے ریکٹر وائس ایڈمرل (ریٹائرڈ) شاہد اقبال ایچ آئی ( ایم) نے اپنے خطاب میں کہا کہ بحریہ یونیورسٹی نے کوالٹی سٹینڈرز پر کبھی سمجھوتہ نہیں کیا اور بحریہ آج کے نوجوان کو مستقبل کا قائد بنانے کیلئے پوری طرح کوشاں ہے۔ انہوں نے کہا کہ بحریہ یونیورسٹی کے مختلف کیمپسسز، تحقیقی اداروں اور کالجز میں دس ہزار سے زیادہ طلبا زیر تعلیم ہیں۔

 انہوں نے کہا کہ بحریہ یونیورسٹی کے انوویشن اور انکیو بیشن سنٹر کی اعلیٰ کارکردگی کی وجہ سے اسے مائیکروسافٹ انوویشن سنٹر کا درجہ دے دیا گیا ہے۔بحریہ یونیورسٹی کے ریکٹر نے کہا کہ بحریہ یونیورسٹی کا میریٹائم پالیسی ریسرچ انسٹیٹیوٹ سٹریٹیجک اہمیت کا حامل ادارہ ہے۔ یہ ادارہ اساتذہ اور طلبا کی تحقیقی صلاحیتوں میں مزید نکھار پیدا کرنے کیلئے سرگرم عمل ہے۔ انہوں نے کہا کہ مستقل فیکلٹی کے علاوہ بحریہ یونیورسٹی میں بزنس اور کارپوریٹ سیکٹر کے ماہرین بھی طلبا کو لیکچر دیتے ہیں اور ان کے ساتھ اپنے تجربات شیئر کرتے ہیں تا کہ طلبا تعلیمی نصاب کے ساتھ ساتھ ماہرین کے عملی تجربات سے بھی استفادہ حاصل کر سکیں۔ انہوں نے توقع ظاہر کی کہ اسلام آباد چیمبر آف کامرس اور بحریہ یونیورسٹی کے درمیان باہمی تعاون کے فروغ سے تعلیمی اداروں اور صنعتی شعبے کے درمیان قریبی روابط کو فروغ حاصل ہو گا جو طلبا اور صنعتوں کیلئے منافع بخش ثابت ہو گا۔

مزید : کامرس


loading...