پاکستان کو بدعنوانی سے پاک کرنے کیلئے پُرعزم ہیں، چیئرمین نیب قمرالزمان چودھری

پاکستان کو بدعنوانی سے پاک کرنے کیلئے پُرعزم ہیں، چیئرمین نیب قمرالزمان ...

  

اسلام آباد(آ ن لائن) قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین قمر زمان چوہدری نے کہا ہے کہ نیب پاکستان کو بدعنوانی سے پاک کرنے کیلئے پرعزم ہے کیونکہ بدعنوانی کینسر کی طرح ملک کو نقصان پہنچاتی ہے، نیب نے ملک سے بدعنوانی کے خاتمہ کیلئے زیرو ٹالرنس پالیسی پر مبنی جامع انسداد بدعنوانی حکمت عملی تشکیل دی ہے۔ یہ بات انہوں نے نیب ہیڈ کوارٹر میں نیب کی کارکردگی سے متعلق ایک جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ نیب کو گذشتہ 16 سال کے دوران افراد اور نجی/سرکاری اداروں کی جانب سے 3 لاکھ 26 ہزار 694 شکایات جمع کرائی گئی ہیں۔ اس عرصہ کے دوران نیب نے 10 ہزار 992 شکایات کی جانچ پڑتال، 7303 انکوائریوں اور 3648 انوسٹی گیشن کی منظوری دی جبکہ 2667 بدعنوانی کے ریفرنس متعلقہ احتساب عدالتوں میں دائر کئے گئے جبکہ سزا کا مجموعی تناسب 76 فیصد ہے۔ نیب مالیاتی کمپنیوں میں فراڈ، بینک فراڈ، بینک نادہندگی، اختیارات کے ناجائز استعمال، عوام کو بڑے پیمانے پر دھوکہ دہی اور سرکاری ملازمین کے سرکاری فنڈز میں خوردبرد کے کیسز کو زیادہ اہمیت دیتا ہے۔ نیب نے اپنے قیام سے لے کر اب تک بدعنوان سے عناصر سے لوٹے گئے 285 ارب روپے وصول کرکے قومی خزانہ میں جمع کرائے ہیں جو کہ نیب کی نمایاں کامیابی ہے۔ انہوں نے کہا کہ 2015ء کے مقابلہ میں 2016ء میں نیب کو دوگنی شکایات، انکوائریوں، انوسٹی گیشن سے نیب پر عوام کا اعتماد ظاہر ہوتا ہے۔ ان اعداد و شمار سے ظاہر ہوتا ہے کہ نیب کے افسران نے بدعنوانی کے خلاف مہم کو قومی فرض سمجھ کر ادا کیا ہے۔

چیئرمین نیب

مزید :

صفحہ آخر -