ٹانک ،گومل زام ڈیم میں غیر قانونی بھرتیوں کیخلاف محسود قبائل کا جرگہ

ٹانک ،گومل زام ڈیم میں غیر قانونی بھرتیوں کیخلاف محسود قبائل کا جرگہ

  

ٹانک(نمائندہ خصوصی)گومل زام ڈیم میں غیر قانونی بھرتیوں کے خلاف محسود قبائل کا کے جر گے چیئرمین واپڈا کو تحریری درخواست پیش کر دی تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز پولیٹیکل کمپاونڈ جنوبی وزیرستان محسود قبائل کا ایک گرینڈ جر گہ ہوا جس میں سنیٹر مولانا صالح شاہ قریشی ،ممبر قومی اسمبلی و سیفران سٹینڈنگ کمیٹی کے چیئر مین مولانا جمال الدین سمیت سینکڑوں مشیران نے شرکت کی جر گے میں اس بات پر افسوس کا اظہار کرتے ہو ئے کہا کہ محسود قبائل نے کثیر المقاصدمنصوبے گومل زام ڈیم25.56سکوائر کلومیٹر کا رقبہ حکومت پاکستان کی ترقی اور استحکام کے لئے بلامعاوضہ تحفے میں دیا ہے کیونکہ اس ڈیم کی تعمیر سے جنوبی وزیرستان کے قبائلیوں کی بجائے ٹانک اور ڈیرہ اسماعیل خان پہنچ رہا ہے شرکاہ جر گے نے چیئر مین واپڈا کو ایک تحریری درخواست روانہ کردیاہے جس میں کہا گیا ہے کہ ہمارے ساتھ دسمبر 2003میں سابق چیئرمین واپڈا ریٹائرڈ جنرل ذولفقار علی خان نے میٹنگ کے دوران ہمارے ساتھ وعدہ کیاتھا کہ گومل زام ڈیم میں جنوبی وزیرستان کے محسود قبائلیوں کو بھرتی کیا جائے گا جس کے سلسلے میں سابق گورنر خیبر پختونخواہ لیفٹننٹ جنر ل ریٹائرڈ افتخار حسین نے بھی چیئر مین واپڈا کو سال2003میں واضع ہدایات دیئے تھے کہ گومل زام ڈیم میں غیر مقامی لوگوں کو ہر گز بھرتی نہ کیا جائے درخواست میں قبائلیوں نے موقف اختیار کیا ہے کہ جنوبی وزیرستان کے مقامی افراد کو نظر انداز کر کے انتظامی اضلاع ٹانک ،ڈیرہ اسماعیل خان ،بھکر ،فصل آباد وغیرہ سے لوگوں کو دھڑادڑلوگوں کو بھرتی کئے جارہے ہیں جو ہمارے حقوق پر شب خون مارنے کی معترادف ہے انہوں نے غیر مقامی افراد کی بھر تیوں کی ریذیڈنٹ انجینئر گومل زام ہائیڈل پاور توقیر کی فوری تبادلہ سمیت غیر قانونی طور پر بھرتی کئے گئے افراد کی فوری برطرفی کا مطا لبہ کیا ،

مزید :

کراچی صفحہ اول -